کملیش تیواری قتل: مولانا محسن شیخ، فیضان اور راشد پٹھان ریمانڈ پر لکھنؤ لائے گئے

ایک طرف کملیش تیواری کے مشتبہ قاتلوں کی گرفتاری پر اتر پردیش پولس نے ڈھائی ڈھائی لاکھ روپے کا انعام رکھ دیا ہے اور دوسری طرف گجرات سے حراست میں لیے گئے تینوں ملزمین کو ریمانڈ پر لکھنؤ لایا گیا ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

کملیش تیواری قتل معاملہ کی جانچ کو رفتار دینے کے لیے اتر پردیش پولس گجرات سےحراست میں لیے گئے مولانا محسن شیخ، فیضان اور راشد پٹھان کو ریمانڈ پر لکھنؤ لے آئی ہے۔ یہاں ان سے قتل معاملہ میں پوچھ تاچھ کی جائے گی اور یہ جاننے کی کوشش کی جائے گی کہ قتل میں شامل دو مشتبہ افراد سے ان کا کیا تعلق ہے۔

بتایا جا رہا ہے کہ اتر پردیش پولس نے کملیش قتل کی سازش کرنے کے الزام میں گرفتار مولانا محسن شیخ سلیم(24)،فیضان(22) اور راشد پٹھان(23) کو احمدا ٓباد سے ریمانڈ پر لکھنؤ لانے کے بعد انھیں خفیہ مقام پر رکھا گیاہے۔ پولس نے امکان ظاہر کیا ہے کہ پوچھ تاچھ کے دوران قتل معاملہ سے متعلق اہم باتوں کی جانکاری مل سکتی ہے۔

اس درمیان اترپردیش پولس نے پیر کو سخت گیر ہندولیڈر کملیش تیواری کے قاتلوں کی گرفتاری پر 5 لاکھ روپئے کے انعام کا اعلان کیا ہے۔ ابھی تک پولس نے ان کی گرفتاری کی ہر ممکن کوشش کی ہے لیکن وہ ناکام رہی ہے۔ وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کی ذریعہ تشکیل دی جانے والی ایس آئی ٹی نے رائے بریلی اور مرادآباد کا دورہ کیا لیکن انہیں وہاں سے کچھ بھی ہاتھ نہیں لگا۔ ایس آئی ٹی کی اطلاع ملی تھی کہ کملیش قتل کے بعد ملزمین بذریعہ ٹرین انہیں مقامات پر کیے گئے تھے۔

ذرائع کے مطابق ایس آئی ٹی کو اطلاع ملی تھی کہ مجرمین نے قتل کے بعد بریلی کے اسپتال میں دوا کے لئے گئے تھے کیوں کہ ان میں سے ایک قتل کے دوران زخمی ہوگیا تھا۔ لیکن جب پولس اسپتال پہنچی تو ملزمین وہاں سے فرار ہوچکے تھے۔

قابل ذکر ہے کہ ہندوسماج پارٹی کے صدر کملیش تیواری کو جمعہ کے دن راجدھانی لکھنؤ کے خورشید باغ علاقے میں ان کی رہائش گاہ پر دو نامعلوم افراد نے چاقو سے حملہ کر کے موت کے گھاٹ اتار دیا تھا۔ قتل کے فورا ًبعد پولس نے اپنے سنسنی خیز دعوی میں انکشاف کیا تھا کہ تیواری قتل کے تار 2015 میں اس کے ذریعہ پیغمبر محمدﷺ کے خلاف دیئے گئے قابل اعتراض بیان سے جڑے ہیں۔اور پولس اب بھی اسی پر قائم ہے۔لیکن کملیش کی ماں کسم تیواری کے عین خلاف بی جے پی لیڈر پر تیواری کے قتل کے الزامات عائد کرتے ہوئے دیگر کئی سنسنی خیز انکشافات کیے تھے۔

تیواری کی کئی ویڈیو کلپ بھی ہیں جن میں اس نے اپنی خان کا خطرہ بتاتے ہوئے خاص افراد کا نام لیا ہے ۔دلچسپ ہے کہ اس ضمن میں پولس کملیش تیواری کی ماں نے جو الزامات عائد کیے ان نکات پر ابھی تک کچھ خاص پیش رفت کرتی نظر نہیں آرہی ہے۔

next