جموں و کشمیر کے ڈی جی جیل کا گلا کاٹ کر قتل، مشتبہ ملازم فرار، پولیس تلاش میں مصروف

پولیس کے مطابق ابتدائی تفتیش سے معلوم ہوا ہے کہ لوہیا کو پہلے قتل کیا گیا، اس کا گلا کاٹنے کے لیے کیچپ کی بوتل استعمال کی گئی۔ اس کے بعد لاش کو جلانے کی بھی کوشش کی گئی

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

جموں: جموں و کشمیر کے ڈی جی جیل ہیمنت کے لوہیا کو ان کے گھر پر گلا کاٹ کر قتل کر دیا گیا ہے۔ ان کے جسم پر زخموں کے نشانات بھی پائے گئے۔ رپورٹ کے مطابق ملی ٹینٹ تنظیم ٹی آر ایف (دی ریزسٹنس فرنٹ) نے قتل کی ذمہ داری قبول کی ہے۔

پولیس کو شبہ ہے کہ یہ واردات افسر کے گھریلو ملازم نے ہی انجام دی ہے۔ واردات کے بعد سے ہی ملازم فرار ہے۔ فرار خادم جموں و کشمیر کے رام بن کا رہائشی ہے، جس کی تلاش کی جا رہی ہے۔ لوہیا کو اگست کے مہینے میں ہی جموں و کشمیر میں ڈائریکٹر جنرل جیل خانہ جات کے عہدے پر ترقی دی گئی تھی۔


پولیس کے مطابق ڈی جی جیل کی لاش ان کے گھر سے مشتبہ حالت میں برآمد ہوئی۔ تفتیش میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ ان کا قتل گلا کاٹ کر کیا گیا ہے۔ ڈی جی پی دلباغ سنگھ نے واقعہ کو افسوسناک قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہا کہ ملزم نے ہیمنت کے لوہیا کی لاش کو جلانے کی بھی کوشش کی۔

جموں کے ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل آف پولیس مکیش سنگھ نے لوہیا کے گھر کا دورہ کیا اور جائے وقوعہ کا معائنہ کیا۔ انہوں نے بتایا کہ لوہیا کے جسم پر جلنے کے نشانات موجود ہیں اور گلا کٹا ہوا ہے۔ پولیس کے مطابق ابتدائی تفتیش سے معلوم ہوا ہے کہ لوہیا کو پہلے قتل کیا گیا اور گلا کاٹنے کے لیے کیچپ کی بوتل استعمال کی گئی۔ اس کے بعد لاش کو جلانے کی کوشش کی گئی۔ لوہیا کے گھر کے باہر گارڈز نے جب ان کے کمرے میں آگ دیکھی تو وہ گیٹ توڑ کر کمرے میں داخل ہوئے۔


اے ڈی ایس ڈی پی نے بتایا کہ ابتدائی تفتیش میں یہ قتل کی واردات لگ رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ فرار ہونے والے گھریلو ملازم کی تلاش جاری ہے۔ فرانزک ٹیم معاملے کی جانچ کر رہی ہے۔ پولیس نے بھی اس معاملے میں تفتیش شروع کر دی ہے۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔