کورونا وائرس: بی ایچ یو-آئی آئی ٹی نے تیار کیا میعاری سینیٹائزر

مصدقہ ذرائع نے بتایا کہ آئی آئی ٹی نے اب تک میونسپل کارپوریشن اور روٹری کلب کو 159 لیٹر سینیٹائز دستیاب کرایا ہے۔ بی ایچ یو احاطے میں تعینات سیکورٹی اہلکار کو سینکڑوں بوتل سینیٹائزر تقسیم کیا گیا ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

وارانسی: کورونا وائرس سے بچاؤ کی مہم کے تحت انڈین انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی۔ بنارس ہندو یونیورسٹی(بی ایچ یو) نے میعاری سینیٹائز تیار کیا ہے۔ جسے ضلع انتظامیہ اور میونسپل کارپوریشن کی مدد سے شہر کے مختلف مقامات پر تقسیم کیا جا رہا ہے۔

مصدقہ ذرائع نے بتایا کہ آئی آئی ٹی نے اب تک میونسپل کارپوریشن اور روٹری کلب کو 159لیٹر سینیٹائز دستیاب کرایا ہے۔ ڈی ایم، ڈی آئی جی اور سی آر پی ایف دفاتر اور بی ایچ یو احاطے میں تعینات سیکورٹی اہلکار کو سینکڑوں بوتل ہینڈ سینیٹائزر تقسیم کیا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ عالمی صحت تنظیم کی جانب سے متعین گائڈ لائن پر عمل کرتے ہوئے محکمہ کیمسٹری کے اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر رما ناتھن اور اسکول آف بائیو میڈیکل کے اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹر مارشل کی نگرانی میں آئی ٹی آئی نے اعلی قسم کے سستے سینیٹائزر دستیاب کرانے کا کام کر رہا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ شہر کمشنر گورنگ راٹھی کی اپیل پر ادارے کی جانب سے دو مراحل میں 127 لیٹر سینیٹائزر دستیاب کرایا گیا ہے۔ روٹری کلب کے ذمہ دار دیپک استھانا کے اپیل پر 32 لیٹر سینیٹائزر دستیاب کرایا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ سی آر پی ایف کے جوانوں کو 1200 بوتل، آئی ٹی آئی اور بی ایچ یو کے سیکورٹی اسٹاف کو 100 بوتل سینیٹائزر دستیاب کرایا گیا ہے۔ مختلف اداروں، اسپتالوں، ڈی اے ڈبلیو میں بھی آئی آئی ٹی کی طرف سے سینیٹائزر بنانے کی ٹریننگ دی گئی ہے۔ موجودہ وقت میں ادارے کو 34بھلن پور پی اے سی نے 125 لیٹر اور روٹری کلب نے 10 لیٹر سینیٹائزر دستیاب کرانے کی درخواست کی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ آئی ٹی آئی اپنے سماجی ذمہ داریوں کو پورا کرتے ہوئے اس خطرناک وائرس سے لڑنے کو پوری طرح تیار ہے اور اس طرح کی سبھی ضرورتوں کے لئے انتظامیہ کو تعاون کرنے کو پوری طرح سے پرعزم ہے۔