میں جموں اور کشمیر کو ایک ہی یونٹ مانتا ہوں: غلام نبی آزاد

غلام نبی آزاد کا کہنا تھا کہ میرے لئے جموں اور کشمیر ایک ہی ہیں میں کسی خطے کی طرفداری نہیں کرتا ہوں، میں اس (جموں وکشمیر) کو ایک ہی یونٹ مانتا ہوں اور سب ہندو-مسلم کو بھائی بھائی مانتا ہوں۔

غلا م نبی آزاد، تصویر آئی اے این ایس
غلا م نبی آزاد، تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

جموں: سینئر کانگریس لیڈر اور سابق وزیر اعلیٰ غلام نبی آزاد کا کہنا ہے کہ میں جموں و کشمیر کو ایک ہی یونٹ مانتا ہوں میرے لئے جموں اور کشمیر الگ الگ نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میں یہاں کے رہنے والے ہندو-مسلم سب کو اپنا بھائی مانتا ہوں۔ ان کا کہنا تھا کہ جموں وکشمیر میں زمین مہنگی ہے کیونکہ میں خود مکان کے لیے زمین خرید نہیں پایا ہوں۔ موصوف نے ان باتوں کا اظہار ہفتے کے روز یہاں نامہ نگاروں کے سوالوں کے جواب دینے کے دوران کیا۔

جب ان سے حد بندی کمیشن کی ڈرافٹ سفارشات کے بارے میں سوال کیا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ ’میرے لئے جموں اور کشمیر ایک ہی ہیں میں کسی خطے کی طرفداری نہیں کرتا ہوں، میں اس (جموں وکشمیر) کو ایک ہی یونٹ مانتا ہوں اور سب ہندو-مسلم کو بھائی بھائی مانتا ہوں‘۔ آزاد نے کہا کہ باہر کے لوگوں کو یہاں کی اراضی کے متعلق غلط تاثر دیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہاں زمین اتنی مہنگی ہے کہ میں خود اپنے لئے مکان کے لئے زمین خرید نہیں پا رہا ہوں۔


سابق وزیر اعلیٰ کا کہنا تھا کہ جموں و کشمیر میں جب بھی الیکشن منعقد ہوں، لیکن سیاسی لیڈروں کو لوگوں کے ساتھ رابطے میں رہنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ میں نے جموں و کشمیر کے اضلاع خاص طور پر دیہی علاقوں کا دورہ کیا، لیکن میرے ان دوروں کا انتخابات سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ضلع جموں کی تجارت پر متصل کے کئی اضلاع کا انحصار ہے لیکن یہاں کی تجارت بھی ٹھپ ہوگئی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔