لیپ ٹاپ۔موبائل کے استعمال سے عاری لوگ نوجوانوں کی بات کیسے سمجھیں گے: اکھلیش

اکھلیش یادو نے طنز کر تے ہوئے کہا کہ ابھی تک ہم یہ جانتے تھے کہ ہمارے وزیر اعلی لیپ ٹاپ چلانا نہیں جانتے، لیکن ابھی ایک افسر نے بتایا کہ وہ موبائل چلانا بھی نہیں جانتے ہیں۔

اکھلیش یادو، تصویر ٹوئٹر @samajwadiparty
اکھلیش یادو، تصویر ٹوئٹر @samajwadiparty
user

یو این آئی

ہردوئی: سماجوادی پارٹی (ایس پی) سربراہ اکھلیش یادو نے اترپردیش کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ پر نوجوان سوچ کو نہ سمجھ پانے کا طنز کستے ہوئے اتوار کو کہا کہ جو آج کے دور میں لیپ ٹاپ۔ موبائل فون بھی چلانا نہیں جانتے وہ نوجوانوں کے مفادت کی بات کیسے سمجھ سکیں گے۔

اکھلیش نے یہاں سماج وادی پارٹی وجے رتھ کے دوسرے مرحلے کی یاترا کا آغاز کرتے ہوئے کہا کہ نوجوان ہی اس ملک کا مستقبل ہیں اور نوجوان کے من کی بات نوجوان سوچ والے لوگ ہی سمجھ سکتے ہیں۔ انہوں نے طنز کیا کہ 'ابھی تک تو ہم یہ جانتے تھے کہ ہمارے وزیر اعلی لیپ ٹاپ چلانا نہیں جانتے ہیں لیکن ابھی ایک افسر نے بتایا کہ وہ موبائل چلانا بھی نہیں جانتے ہیں۔ ذرا سوچو جو آج کے زمانے میں موبائل اور لیپ ٹاپ کے استعمال سے عاری ہو وہ نوجوانوں کی بات کیسے سمجھے گا۔


اکھلیش نے بی جے پی پر سماج میں ذات اور مذہب کی بنیاد پر تفریق پیدا کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ دنیا میں ہندوستان کی شناخت متعدد مذاہت اور ذات کے لوگوں کا ایک ساتھ مل کر رہنے کی رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کوئی نظریہ اگر ایسا ہو جو ہمیں لڑانے کا کام کرے ہم اسے نہیں مانیں گے۔ ہم صرف سماج وادی نظریہ کا راستہ دکھانے والے اپنے ملک کے آئیں کو مانتے ہیں۔

سابق وزیر اعلی نے کہا کہ بی جے پی کے صرف دو سب سے مقبول کام ہیں۔ پہلا مختلف مقامات کے نام بدلنا اور دوسرا بیت الخلا بنوانا، انہوں نے کہا کہ جو سماجوادی پوروانچل ایکسپریس ایس پی حکومت میں بن رہا تھا وزیر اعلی نے اس کا نام بدل دیا۔ اسی طرح ایس پی حکومت میں نیویارک پولیس کی طرز پر اترپردیش پولیس کی ہیلپ لائن نمبر 'یوپی 100 شروع کیا گیا تھا۔ یہ ایسی سروس تھی کہ اگر گاؤں سے بھی کوئی فون کرے تو پولیس اس کی مدد کرنے پہنچتی تھی۔ مگر وزیر اعلی یوگی نے اس کا بھی نام بدل کر ڈائل 112 کر دیا۔


انہوں نے یوگی حکومت پر تعلیم، روزگار اور صحت سمیت دیگر سبھی شعبوں میں کوئی کام نہ کرنے کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ مہنگائی کی اضافی مار میں عام آدمی کی زندگی مشکل ہوگئی ہے۔ سابق وزیر اعلی نے کہا کہ پٹرول۔ڈیزل مہنگا کر کے نجی کمپنیوں کا منافع کراویا جا رہا ہے۔ جب جب سماج وادی رتھ چلا ہے تب تب ایس پی کی حکومت بنی ہے اور اب تو پٹرول۔ڈیزل مہنگا کر کے سرکار بھی اشارہ کر رہی ہے کہ آپ سائیکل چلائیے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔