گجرات: اومیکرون ویرینٹ کے مزید 2 معاملوں کی تصدیق، پہلے مریض کی اہلیہ اور برادر نسبتی بھی متاثر

گجرات میں کورونا وائرس کے اومیکرون ویرینٹ کے دو اور نئے معاملے سامنے آئے ہیں۔ اس کے ساتھ ریاست میں اب تک اس قسم کے کل تین معاملوں کی تصدیق ہوئی ہے

اومیکرون ویرینٹ
اومیکرون ویرینٹ
user

یو این آئی

احمد آباد/جام نگر: گجرات میں کورونا وائرس کے اومیکرون ویرینٹ کے دو اور نئے معاملے سامنے آئے ہیں۔ اس کے ساتھ ریاست میں اب تک اس قسم کے کل تین معاملوں کی تصدیق ہوئی ہے، حالانکہ تینوں کا تعلق ایک ہی خاندان سے ہے اور یہ صرف جام نگر میں پائے گئے ہیں۔

ریاستی محکمہ صحت کے سرکاری ذرائع نے آج بتایا کہ افریقی براعظم میں زمبابوے سے 27 نومبر کو جام نگر واپس آنے والے 72 سالہ شخص میں 2 دسمبر کو اومیکرون ویرینٹ کے انفیکشن کی تصدیق ہوئی تھی۔ یہ ریاست میں اس طرح کا پہلا معاملہ تھا۔ آج اس کی اہلیہ اور برادر نسبتی میں بھی تصدیق ہو گئی ہے۔ انہیں احتیاط کے طور پر پہلے ہی آئسولیشن وارڈ میں رکھا گیا ہے۔


گجرات میں اس تازہ ترین کورونا وائرس کی دستک کے پیش نظر جو کہ جنوبی افریقہ، بوٹسوانا سمیت کچھ دوسرے ممالک میں تباہی مچا رہا ہے اور پوری دنیا کے طبی سائنسدانوں کے لیے ایک سنگین تشویش کا موضوع بن گیا ہے۔ اس سلسلے میں وزیراعلی بھوپیندر پٹیل نے ایک خصوصی جائزہ میٹنگ بھی کی۔

افریقی براعظم اور دیگر ممالک سے حال ہی میں واپس آنے والے مسافروں کی سخت نگرانی کی جا رہی ہے۔ گجرات میں شام 5 بجے تک گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا کے کل 70 نئے معاملے سامنے آئےہیں جب کہ 28 صحتیاب ہوئے تھے۔ ایکٹو معاملوں کی کل تعداد 459 ہوگئی تھی۔ تقریباً ساڑھے چھ کروڑ کی آبادی والی اس مغربی ریاست میں اب تک کورونا ویکسین کی ساڑھے آٹھ کروڑ سے زیادہ خوراکیں دی جا چکی ہیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔