خوشخبری! دربھنگہ سے دہلی، ممبئی اور بنگلورو کے لیے پروازیں 8 نومبر سے ہوں گی شروع

ایئرلائن کمپنی اسپائس جیٹ ان راستوں پر پرواز شروع کرے گی اور ٹکٹ کی بکنگ شروع ہوگئی ہے۔ حکومت کی علاقائی رابطہ اسکیم 'اڑان' کے تحت ایئر لائنز کے لئے ان راستوں کو مختص کیا گیا تھا۔

اسپائس جیٹ، تصویر یو این آئی
اسپائس جیٹ، تصویر یو این آئی
user

یو این آئی

نئی دہلی: بہار کے دربھنگہ ہوائی اڈے سے آئندہ 8 نومبر سے دہلی، ممبئی اور بنگلور کے لئے پروازیں شروع ہوں گی۔ سستی ایئرلائن کمپنی اسپائس جیٹ ان راستوں پر پرواز شروع کرے گی۔ ٹکٹ کی بکنگ شروع ہوگئی ہے۔ حکومت کی علاقائی رابطہ اسکیم 'اڑان' کے تحت ایئر لائنز کے لئے ان راستوں کو مختص کیا گیا تھا۔

اسپائس جیٹ نے آج کہا کہ تمام راستوں پر ایک طرف کا کرایہ 3799 روپے سے شروع ہوگا جس میں تمام ٹیکس اور فیس شامل ہوں گی۔ دربھنگہ 55 ویں گھریلو منزل ہے جو ایئر لائن کے نیٹ ورک میں شامل ہوئی ہے۔ ان راستوں پر بوئنگ 737-800 طیارے چلائے جائیں گے۔

دربھنگہ بہار کا پانچواں سب سے بڑا شہر اور متھلانچل خطے کا مرکز ہے۔ یہاں سے پرواز شروع کرنے سے مظفر پور، مدھوبانی، سمستی پور، سیتا مڑھی، چمپارن، سہارسہ اور پورنیہ اضلاع کے لوگوں کو بھی فائدہ ہوگا جو اب بھی ہوائی سفر کے لئے پٹنہ جانا پڑتا ہے۔ نیپال سے رابطہ یہاں سے بھی آسان ہوجائے گا۔

اسپائس جیٹ نے بتایا کہ یہ تمام پروازیں ہفتے میں سات دن دستیاب ہوں گی۔ ممبئی سے دربھنگہ کے لئے فلائٹ صبح 9.40 بجے روانہ ہوگی اور دوپہر 12.10 پر پہنچے گی اور واپسی کی پرواز ممبئی کے لئے دوپہر 12.40 بجے روانہ ہوگی۔ بنگلورو سے آنے والی فلائٹ صبح 8.45 بجے دربھنگہ کے لئے اڑان بھرے گی اور واپسی میں شام 4.25 بجے بنگلورو کے لئے روانہ ہوگی۔ دہلی جانے والی فلائٹ صبح 11.45 بجے دربھنگہ سے روانہ ہوگی اور واپسی کی پرواز دہلی سے داربھنگہ کے لئے صبح 1.30 بجے اڑان بھرے گی۔

دیوالی اور چھٹھ سے پہلے شروع ہونے والی اس فلائٹ سے متھلانچل کے لوگوں کو کافی راحت ملے گی۔ عام دنوں میں بھی بہار کے لئے ٹرینوں اور طیاروں میں ٹکٹ حاصل کرنا بہت مشکل ہے۔ تہواروں کے دوران، خاص طور پر چھٹھ کے دوران، مانگ میں اضافہ ہوتا ہے۔

next