ہندوستان کو ملا پہلا رافیل طیارہ، راجناتھ نے کی اس میں پرواز

۔ راجناتھ سنگھ یہاں میری نیک ایئربیس پر طیارہ کی روایتی طریقہ سے پوجا کرنے کے بعد اس پر سوار ہوئے اور داسو کمپنی کے چیف پائلٹ نے اس طیارہ کو اڑایا

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

یو این آئی

بوردو (فرانس): فرانس کا سرخیوں میں رہنے والا رافیل طیارہ منگل کو ہندستان کو مل گیا اور وزیر دفاع راجناتھ سنگھ نے اس طیارہ میں پرواز کر کے تاریخ رقم کی۔ راجناتھ سنگھ یہاں میری نیک ایئربیس پر طیارہ کی روایتی طریقہ سے پوجا کرنے کے بعد اس پر سوار ہوئے اور داسو کمپنی کے چیف پائلٹ نے اس طیارہ کو اڑایا۔ راجناتھ سنگھ پائلٹ کی پچھلی سیٹ پر بیٹھے اور انہوں نے وہاں سے ہاتھ ہلاکر اس تاریخی لمحہ کی نشاندہی کی۔ وزیر دفاع نے نصف گھنٹے تک اس جنگی طیارہ میں پرواز کی۔

طیارہ نے جیسے ہی ٹیک آف کیا تو اس کی گرجنے کی آواز سے آسمان گونج اٹھا۔ ہوائی اڈہ پر کھڑے ہندوستان اور فرانس کے سینئر فوجی حکام کے علاوہ نامہ نگاروں نے بھی راجناتھ سنگھ کو پرواز کرتے دیکھا اور اس تاریخی لمحہ کے شاہد بھی بنے۔ رافیل نے یہ پرواز ایسے وقت میں کی جب ہندوستان میں آج ہی کے دن 87ویں یوم فضائیہ کے ساتھ ساتھ وجے دشمی منائی گئی۔ وزیر دفاع نے اس طیارہ میں پرواز سے پہلے اس کی ہندو رسم و رواج سے اس کی پوجا کی اور اس کے ٹائر کے نیچے لیمو رکھے۔

اس سے پہلے راجناتھ سنگھ نے اپنے خطاب میں کہا کہ ہندوستانی فضائیہ کو رافیل طیارہ مل جانے سے ہماری صلاحیت بڑھے گی۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان۔فرانس کے سیاسی رشتے مضبوط ہو رہے ہیں اور انہیں امید ہے کہ رافیل طیاروں کی ڈلیوری وقت پر کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ آج ہندوستانی سلامتی دستوں کے لئے تاریخی دن ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج وجے دشمی کا دن ہے۔ یعنی برائی پر اچھائی کی جیت کا دن۔ آج 87 واں یوم فضائیہ بھی ہے۔ 2016میں رافیل طیاروں کے لئے معاہدہ کیا گیا تھا۔ انہیں خوشی ہے کہ رافیل کی ڈلیوری وقت پر ہو رہی ہے۔ ہماری توجہ فضائیہ کی صلاحیت بڑھانے پر ہے۔ وہ فرانس کے شکر گزار ہیں۔ تھوڑی دیر بعد رافیل میں پرواز کریں گے جو ایک اعزاز کی بات ہے۔ انہوں نے کہا کہ رافیل ایک فرینچ لفظ ہے جس کا مطلب آندھی ہوتا ہے۔ یہ اپنے نام کے حساب سے ہماری فضائیہ کو مضبوط کرے گا۔

ستمبر 2016 میں ہندوستان نے 59,000 کروڑ روپے کی لاگت سے 36 رافیل طیاروں کی خریداری کے لئے فرانس کے ساتھ ایک بین سرکاری معاہدہ پر دستخط کیے تھے۔ رافیل طیارہ کی پہلی کھیپ میں چار طیارے اگلے برس مئی میں پہنچیں گے۔ اس کے بعد چار چار کی کھیپ میں باقی طیارے 2022 تک ہندوستان آجائیں گے۔

Published: 8 Oct 2019, 10:28 PM