’نمستے ٹرمپ‘ پروگرام سے ہندوستان میں پھیلنا شروع ہوا کورونا: سنجے راؤت

سنجے راؤت نے کہا کہ مہاراشٹر میں کورونا وائرس کو روکنے میں ناکام رہنے کا حوالہ دے کر ادھو ٹھاکرے کی سربراہی والی مخلوط حکومت کو گرانے اور صدر راج نافذ کرنے کی کوئی بھی کوشش خودکشی ہوگی۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

شیوسینا لیڈر سنجے راؤت نے اتوار کو الزام عائد کیا کہ امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے استقبال کے لئے فروری میں گجرات کے احمد آباد میں منعقد پروگرام اور بعد میں ممبئی اور دہلی میں متعدد وفد کے ارکان کی آمد کورونا وائرس کے پھیلاؤ کا ذمہ دار ہے۔ سنجے راؤت نے مرکزی حکومت پر حملہ کرتے ہوئے کہا کہ لاک ڈاؤن کو بغیر کسی منصوبے کے نافذ کردیا، لیکن اب اسے ہٹانے کی ذمہ داری ریاستوں پر ڈال دی گئی ہے۔

اس درمیان سنجے راؤت نے ریاست کی مہاراشٹروکاس اگاڑی مخلوط حکومت کے گر نے کا بی جے پی کے دعویٰ کو درکنار کرتے ہوئے کہا کہ ریاستی حکومت کو کسی طرح کا کوئی خطرہ لاحق نہیں ہے کیونکہ تمام حکمران جماعتیں شیوسینا ، نیشنلسٹ کانگریس پارٹی اور کانگریس اس حکومت کا وجود برقرار رکھنے پر مجبور ہیں۔

سنجے راؤت نے شیوسینا کے ترجمان 'سامنا' میں ہندوستان میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کے تعلق سے لکھا کہ’’اس سے انکار نہیں کیا جاسکتا ہے کہ کورونا وائرس گجرات میں پھیلا کیونکہ ڈونالڈ ٹرمپ کے استقبال میں کافی تعداد میں لوگ جمع ہوئے تھے۔ ٹرمپ کے وفد میں شامل کچھ اراکین ممبئی اور دہلی گئے تھے،جس کی وجہ سے یہ وائرس پھیلا۔" واضح رہے کہ ڈونالڈ ٹرمپ کا استقبال گجرات کے احمد آباد میں 'نمسٹے ٹرمپ' پروگرام کے ذریعہ کیا گیا تھا، جس میں وزیر اعظم نریندرمودی نے بھی حصہ لیا تھا۔

سنجے راؤت نے کہا کہ ریاست میں کورونا وائرس کو روکنے میں ناکام رہنے کا حوالہ دے کر ادھو ٹھاکرے کی سربراہی میں مخلوط حکومت کو گرانے اور صدر کی حکمرانی نافذ کرنے کی کوئی بھی کوشش خودکشی ہوگی۔ انہوں نے مزید کہا کہ ’’سب نے دیکھا ہے کہ کچھ ماہ قبل ریاست میں کس طرح سے صدر راج لگایا اور ہٹایا گیا تھا۔اگر کورونا وائرس سے نمٹنے کی بنیاد ہی صدر راج نافذ کرنے کا معیار ہے،تو بی جے پی حکمراں ریاست کے ساتھ ملک کے 17ریاستوں میں صدر راج نافذ کرنا چاہئے۔یہاں تک کہ مرکزی حکومت بھی اس وبا کو روکنے میں ناکام ثابت ہوئی ہے کیونکہ اس کے پاس اس کے خلاف جنگ کے لئے کوئی منصوبہ نہیں ہے۔"

شیو سینا لیڈر نے کہا کہ ’’لاک ڈاؤن کو بغیر کسی منصوبے کے نافذ کیا گیا اور بغیر کسی منصوبے کے اس کو ہٹانے کی ذمہ داری ریاستوں پر ڈالی جارہی ہے۔" انہوں نے مزید کہا کہ "کانگریس لیڈر راہل گاندھی نے بہترین طریقہ سے سمجھایا تھا کہ لاک ڈاؤن کیسے ناکام ہوا۔یہ تعجب خیزامر ہے کہ لوگ کورونا وائرس معاملوں میں اضافہ کے لئے مہاراشٹر میں صدر راج کا مطالبہ کرنے کی سیاست کرسکتے ہیں۔"

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


next