متاثرہ کی خودسوزسی کی دھمکی تک ’موٹی چمڑی‘ کی بی جے پی حکومت، ایکشن نہیں لیتی: پرینکا

کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے کہا کہ ریپ کے ملزم چنمیانند کو متاثرہ لڑکی کی خودسوزی کی دھمکی کے بعد ہی گرفتار کیا گیا ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

نئی دہلی: آبروریزی کے الزامات کا سامنا کر رہے سابق مرکزی وزیر چنمیانند کے معاملہ میں گزشتہ کچھ دنوں سے اتر پردیش حکومت کو نشانے پر لیتے ہوئے کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی نے کہا کہ ملزم کو متاثرہ لڑکی کی خودسوزی کی دھمکی کے بعد ہی گرفتار کیا گیا ہے۔

محترمہ گاندھی نے ٹوئیٹ کیا،’’ بی جے پی حکومت کی کھال اتنی موٹی ہے کہ جب تک متاثرہ کویہ نہ کہنا پڑا کہ میں خودکشی کرلونگی ،تب تک حکومت نے کوئی کارروائی نہیں کی ۔یہ عوام اور صحافت کی طاقت تھی کہ خصوصی جانچ ٹیم کو بی جے پی لیڈر چنمیا نند کو گرفتار کرنا پڑا ۔ عوام نے یہ یقینی بنایاکہ بیٹی بچاؤ صرف نعروں میں نہ رہے بلکہ حقیقت میں بھی ہو۔‘‘

اس سے قبل خصوصی جانچ ٹیم نے چنمیانند کو اس کی شاہجہاں پور رہائش گاہ سے گرفتار کیا۔ اس کے ہی ایک کالج میں پڑھنے والی طالبہ نے چنمیا نند پر عصمت دری کا الزام لگایاہے ۔اس طالبہ نے جمعرات کو دھمکی دی تھی کہ اگر بی جے پی لیڈر کو گرفتار نہیں کیاجاتا ہے تو وہ خودسوزی کرلے گی ۔

اس طالبہ کے ذریعہ الزام لگائے جانے کے بعد کانگریس سمیت کئی اپوزیشن پارٹیوں نے چنمیا نند کی گرفتاری کامطالبہ کیا تھا۔ اس سے قبل کانگریس لیڈر نے الزام لگایا تھا کہ پولس اور انتظامیہ کی لاپروائی کی وجہ سے پہلے اناؤ معاملہ میں متاثرہ کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا اور اب شاہجہاں پور معاملہ میں بھی یہی ہو رہا ہے ۔