بی جے پی امن و امان خراب کرنے کی کوشش کررہی ہے: پٹولے

پٹولے نے کہا کہ بی جے پی فرقہ وارانہ منافرت پھیلاکر سیاسی روٹی سیکنا چاہتی ہے اور سوال کیا کہ کیا بی جے پی گجرات کی طرح مہاراشٹر میں بھی دنگے فساد کے کا استعمال کرنا چاہتی ہے۔

فائل علامتی تصویر آئی اے این ایس
فائل علامتی تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

مہاراشٹر کانگریس کے صدر نانا پٹولے نے پیر کو کہا کہ امراوتی میں حالات پر امن ہیں لیکن بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) جان بوجھ کر امن و امان خراب کرنے اور حالات بگاڑنے کی کوشش کررہی ہے۔

پٹولے نے کہا کہ بی جے پی فرقہ وارانہ منافرت پھیلاکر سیاسی روٹی سیکنا چاہتی ہے۔ انہوں نے سوال کرتے ہوئے کہا کہ کیا بی جے پی گجرات کی طرح مہاراشٹر میں بھی دنگے فساد کے کا استعمال کرنا چاہتی ہے۔ انہوں نے آج یہاں ایک پریس ریلیز جاری کرکے بی جے پی کو نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ جب سے وہ انتخابات میں منہ کی کھائی ہے تب سے مخالف جماعت کے طورپر نہیں بلکہ مہاراشٹر مخالف پارٹی کے طورپر اپنا طرز عمل اپنا رہی ہے۔


انہوں نے کہا کہ نانڈیر اور امراوتی میں پیش آئے واقعات ریاست اور ریاستی حکومت کے لیے باعث تشویش ہیں۔ لیکن حکومت نے بروقت حالات پر قابو پالیا ہے۔ بی جے پی کے ذریعہ اشتعال انگیزی کی جارہی ہے جب کہ بی جے پی کو ایک ذمہ دار حزب مخالف کا کردار ادا کرنا چاہئے۔

پٹولے نے کہا کہ بی جے پی لیڈر جس طرح کا سلوک کررہے ہیں، اس سے سوال پیدا ہوتا ہے کہ کیا وہ اپوزیشن لیڈر ہیں یا مہاراشٹر مخالف لیڈر ہیں۔انہوں نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ گجرات بھر میں بی جے نے گودھرا دنگوں کو آزمایا اور پھر پورے ملک میں فرقہ وارانہ منافرت پھیلائی۔ اب وہ اپنے سیاسی فائدے کے لیے مہاراشٹر میں کشیدگی کو ہوا دینا چاہتی ہے تاکہ اتر پردیش میں آئندہ انتخابات کے وقت اس کا فائدہ اٹھاسکے۔


انہوں نے کہا کہ مہاراشٹر کے عقل مند اور مہذب لوگ ان کے ناپاک عزائم کو پورا نہیں ہونے دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی لیڈروں کو ان کوششوں کو روکنا چاہئے اور مہاراشٹر کو پر امن بنائے رکھنے کی سمت میں کام کرنا چاہئے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔