بہار میں این آر سی معاملہ پر بی جے پی میں ہی اختلاف

بی جے پی رہنما سشیل مودی جہاں ریاست میں این آر سی کے مخالف ہیں وہیں نتیش حکومت کے وزیر اور بی جے پی رام نارائن منڈل نے کہا کہ ریاست میں این آر سی کا نفاذ ہوگا اور اس پر کسی طرح کا اختلاف نہیں ہے!

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

بھاگلپور: بہار میں حزب اقتدار جنتا دل یونائٹیڈ ( جے ڈی یو) کے ساتھ نائب وزیراعلیٰ اور بھارتیہ جنتا پارٹی ( بی جے پی ) کے سنیئر لیڈر سشیل کمار مودی جہاں ریاست میں قومی سٹیزن رجسٹر (این آر سی) کے مخالف ہیں وہیں نتیش حکومت کے محصولات اور اصلاحات اراضی اور بی جے پی لیڈر رام نارائن منڈل نے کہا کہ ریاست میں این آر سی کا نفاذ ہوگا اور اس پر کسی طرح کا اختلاف نہیں ہے۔

منڈل نے یہاں بھاگلپور اور بانکا ضلع کے محکمہ جاتی عہدیداران کے ساتھ جائزہ میٹنگ کے بعد نامہ نگاروںسے بات چیت میں کہاکہ بہارمیں بھی این آر سی کا نفاذ ہوگا اور اس پر کسی طرح کا اختلاف نہیں ہے۔ انہوں نے کہاکہ بہار میں این آر سی نافذ ہونے سے عام لوگوںکو کافی فائدہ ہوگا وہیں غلط طریقے سے رہنے والے لوگوں کی سرگرمیوں پر روک لگ پائے گی ۔

غورطلب ہےکہ مرکزی وزیر داخلہ اور بی جے پی کے قومی صدر امت شاہ نے بد ھ کو رانچی میں کہا تھاکہ این آر سی پورے ملک میں نافذہوگا ۔ ساتھ ہی مرکزی وزیر گری راج سنگھ سمیت بی جے پی کے دیگر لیڈران بہار میںبھی اسے نافذ کرنے کی مانگ کر رہے ہیں۔ وہیں نائب وزیراعلیٰ مودی نے کہاکہ بہار میں این آر سی کا نفاذ زیر غور نہیں ہے۔

وزیر نے کہاکہ ریاست کے کچھ اضلاع میں سیلاب کے امکانات کو دیکھتے ہوئے تمام تیاریاں پوری کرلی گئی ہیں اور متاثرہ علاقوں میں این ڈی آر ایف کو الرٹ کر دیا گیا ہے۔ سیلا ب متاثرین کو کسی طرح کی تکلیف نہیںہونے دی جائے گی ۔ وزیراعلیٰ نتیش کمار کی قیادت میں سرکاری مشنری پوری طرح تیار اور چوبیس گھنٹے نظر رکھ رہی ہے۔

مسٹر منڈل نے کہاکہ بھاگلپور ڈویژن سمیت ریاست میں عام لوگوںسے جڑے زمین اور محصولات سے متعلق سارکے کاموں کو تیزی سے کرنے کیلئے سبھی افسران کو کہا گیا ہے۔ اگر کوئی افسر اس میں کوتاہی برتتے ہیں تو ان کے خلاف کاروائی کی جائے گی ۔ انہوں نے قبول کیاکہ آج ریاست میں زمینی تنازعے میں اضافہ ہوا ہے اور اس وجہ سے جرائم سمیت کئی مسائل پیداہوگئے ہیں۔ اس لئے انہوں نے محکمہ جاتی افسران کو زمین سے متعلق تنازعہ کو تیزی سے نمٹانے کی ہدایت دی ہے ۔

وزیرنے کہاکہ ریاست کے مختلف حصوں میںزمینی لگان اور داخل خارج کو آن لائن کرنے کے کام کو مقررہ مدت میں پورا کرلیا جائے گا۔ اس کے علاوہ آن لائن جمع بندی کا کام اس سال 02 اکتوبر سے شروع کر دیاجائے گا اور اس کا عمل تیزی سے چل رہاہے تاکہ عوام کو کسی طرح کی پریشانی نہ ہو ۔ انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہاکہ ریاست کے سبھی بلاکوں ، ڈویژن اور ضلع سطح کے محکمہ جاتی دفاتر میں وافر مقدار میں ملازمین اور امین کی تقرری جلد ازجلد ہوگی ۔

محصولات محکمہ کے پرنسپل سکریٹری ویویک کمار سنگھ نے بلاک سے ضلع سطح کے محکمہ جاتی کاموں خاص کر مفاد عامہ سے جڑے جمع بندی ، داخل خارج ، زمینی لگان ، زمین منتقلی کو ترجیح دینے کی ہدایت سبھی افسران کو دی ۔ ساتھ ہی عام لوگوں سے جڑی شکایتوں کے نپٹارہ میں بے وجہ تاخیر نہیں کرنے کی بھی ہدایت دی ۔ اجلاس میں پرنسپل سکریٹری کے علاوہ بھاگلپور اور با نکا کے ضلع مجسٹریٹ ، سبھی اے ڈی ایم ، سب ڈویژنل افسر ان بھی موجود تھے۔

Published: 20 Sep 2019, 10:10 PM