بنگال انتخابات: چھٹے مرحلہ کے تحت 43 سیٹوں پر پولنگ جاری، 306 امیدوار میدان میں

مغربی بنگال اسمبلی کے لئے چھٹے مرحلہ کے تحت 43 اسمبلی حلقوں میں آج ووٹنگ ہو رہی ہے اور ایک کروڑ سے زیادہ رائے دہندگان 306 امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ کر رہے ہیں

تصویر بشکریہ ٹوئٹر
تصویر بشکریہ ٹوئٹر
user

قومی آوازبیورو

کولکاتا: مغربی بنگال اسمبلی کے لئے چھٹے مرحلہ کے تحت 43 اسمبلی حلقوں میں آج ووٹنگ ہو رہی ہے اور ایک کروڑ سے زیادہ رائے دہندگان 306 امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ کر رہے ہیں۔

چھٹے مرحلہ کے تحت مغربی بنگال کے چار اضلاع شمالی دیناج پور، ندیا، شمالی 24 پرگنہ اور مشرقی بردوان کے 43 حلقوں، شمالی 24 پرگنہ کی 17 سیٹوں، شمالی دیناج اور ندیا کی 9 سیٹوں پر اور مشرقی بردوان کی 8 سیٹوں پر پولنگ شروع ہو گئی۔ ترنمول کانگریس اور بی جے پی نے تمام 43 اسمبلی حلقوں میں امیدوار کھڑے کیے ہیں۔ پولنگ اسٹیشنوں کی کل تعداد 14480ہے۔

ووٹنگ کے دوران نگرانی کے لئے 28 جنرل مبصرین، 13 خصوصی پولیس سپروائزر اور 13 اخراجات کے نگران افراد کو مقرر کیا گیا ہے۔ الیکشن کمیشن کی جانب سے دی گئی معلومات کے مطابق اب تک 52 کروڑ ، 38 لاکھ نقد رقم برآمد ہوئی ہے ، جبکہ 33 کروڑ ، 27 لاکھ روپے مالیت کی غیر قانونی شراب ضبط کرلی گئی ہے۔ 119 کروڑ روپے کی منشیات ضبط کرلی گئی ہیں۔

ووٹنگ کے چھٹے مرحلے کے دوران بہت سے قدآور امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ بھی ہوگا، جن میں بی جے پی کے قومی نائب صدر مکل رائے، بی جے پی کے سینئر لیڈر راہل سنہا، ممتا بنرجی کے وزیر جیوتری پریہ ملک، ریاستی وزیر چندریما بھٹاچاریہ، فلم ڈائریکٹر راج چکورورتی، کوسانی مکھرجی وغیرہ شامل ہیں۔

کورونا وائرس کی دوسری لہر کے درمیان الیکشن کمیشن کے ایک عہدیدار کا کہنا ہے کہ گزشتہ مراحل میں تشدد کے پیش نظر حفاظت کے سخت انتظامات کئے گئے ہیں۔ چوتھے مرحلہ کی 10 اپریل کو ہونے والی ووٹنگ کے دوران 5 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔ انہوں نے کہا کہ کمیشن نے ووٹنگ کے دوران کورونا سے متعلق تمام رہنما ہدایات سختی سے عمل کیا جائے۔ مغربی بنگال میں منگل کے روز کورونا وائرس کے 9819 نئے معاملے رپورٹ ہوئے ہیں جو اب تک کی سب سے زیادہ تعداد ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


Published: 22 Apr 2021, 8:22 AM