ایودھیا: بابری مسجد کے مقام پر رام مندر تعمیر کے لئے مودی کے ہاتھوں بھومی پوجن کی تیاریاں جاری

وزیراعظم مودی پانچ اگست کی دوپہر ایودھیا پہنچیں گے جہاں وہ مندر کی تعمیر کے لئے بھومی پوجن اور سنگ بنیاد رکھیں گے۔ وارانسی سے خاص طور پر بلائے گئے پروہت بھومی پوجن کروائیں گے۔

تصویر یو این آئی
تصویر یو این آئی
user

قومی آوازبیورو

لکھنو: ایودھیا میں پانچ اگست کو بابری مسجد کے مقام پر مندر کی تعمیر کے لئے ہونے والی بھومی پوجن تقریب کے لئے تیاریاں زوروں پر ہیں۔ وزیراعظم نریندر مودی بذات خود ایودھیا میں مندر کی تعمیر کے لئے بھومی پوجن کریں گے اور سنگ بنیاد رکھیں گے۔ وزیر اعظم مودی کا ہیلی کاپٹر ساکیت ڈگری کالج میدان پر اترے گا جہاں سے وہ شری رام جنم بھومی کے لئے روانہ ہوں گے۔ جس سڑک سے وزیراعظم کا قافلہ گزرے گا، اس کی مرمت کام کام زور شور سے جاری ہے۔ سڑک کے دونوں طرف کے مکانات اور بجلی کے کھمبوں کو پیلے رنگ سے رنگ دیا گیا ہے۔ کچھ خستہ حال مکانات پر پیلا رنگ لگایا گیا ہے۔

میونسپل کارپوریشن کے افسر کھمبوں پر لگے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے پوسٹر اور بینر ہٹا رہے ہیں۔ میونسپل کارپوریشن کے ایک افسر نے بتایا کہ ضلع انتظامیہ کی ہدایت پر وہ سیاسی جماعت سے متعلق پوسٹر ہٹا رہے ہیں۔ راستوں کو چمکایا جارہا ہے۔ قافلہ کے گزرنے والے راستے کی ہر باونڈری وال کی مرمت کی جارہی ہے۔ افسر نے بتایا کہ غالباً کل تک راستے کو پوری طرح چمکا دیا جائے گا۔

وزیراعظم مودی پانچ اگست کی دوپہر ایودھیا پہنچیں گے جہاں وہ مندر کی تعمیر کے لئے بھومی پوجن اور سنگ بنیاد رکھیں گے۔ وارانسی سے خاص طور پر بلائے گئے پروہت بھومی پوجن کروائیں گے۔ اس تاریخی پروگرام میں راشٹریہ سویم سیوک سنگھ کے سربراہ موہن بھاگوت کے علاوہ سابق وزیراعلی کلیان سنگھ، اومابھارتی، ونے کٹیار سمیت مندر کی تعمیر سے جڑی کئی ہستیاں حصہ لیں گی۔

پروگرام میں سابق وزیراعظم لال کرشن اڈوانی اور ڈاکٹر مرلی منوہر جوشی کے پہنچنے کی فی الحالی سرکاری طور پر اب تک تصدیق نہیں ہوئی ہے۔ بھومی پوجن پروگرام کے لے ایودھیا میں سیکورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں اور ہر آنے جانے والی گاڑی کو چیک کیا جارہا ہے۔ چار اگست سے بھومی پوجن پروگرام ختم ہونے تک ایودھیا کی سرحد سیل کردی جائے گی۔

next