اسمبلی انتخابات: ہماچل اور گجرات میں پرانی پنشن اسکیم نافذ کریں گے، پرینکا گاندھی کا وعدہ

کانگریس نے کہا ہے کہ ہماچل پردیش اور گجرات اسمبلی انتخابات کے بعد اگر پارٹی حکومت بناتی ہے تو پرانی پنشن اسکیم کو لاگو کیا جائے گا

پرینکا گاندھی / یو این آئی
پرینکا گاندھی / یو این آئی
user

قومی آوازبیورو

نئی دہلی: کانگریس نے کہا ہے کہ ہماچل پردیش اور گجرات اسمبلی انتخابات کے بعد اگر پارٹی حکومت بناتی ہے تو پرانی پنشن اسکیم کو لاگو کیا جائے گا۔

کانگریس جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے جمعرات کو فیس بک پوسٹ میں کہا کہ پنشن ملک کی خدمت کرنے والے ہر سرکاری ملازم کی بڑھاپے کا سہارا ہے۔ پنشن حاصل کرنا ہر سرکاری ملازم کا حق ہے، جسے بی جے پی حکومت ان سے چھین رہی ہے، لیکن اگر کانگریس کی حکومت بنی تو پنشن اسکیم کو نافذ کیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ پنشن ملازمین کا حق، کانگریس پرانی پنشن اسکیم کو بحال کرے گی۔ پرانی پنشن کو ختم کرکے بی جے پی نے ملک کے بزرگوں سے ان کی مالی حفاظت چھین لی۔ جو اہل وطن زندگی بھر ملک کی خدمت کرتے ہیں وہ بڑھاپے میں کہاں جائیں؟ اپنی زندگی کیسے گزاریں۔ جب کوئی شخص سرکاری ملازمت میں جاتا ہے تو وہ سوچتا ہے کہ جب وہ ریٹائر ہو جائے گا تو اسے مالی عدم تحفظ کا سامنا نہیں کرنا پڑے گا۔


انہوں نے کہا کہ پنشن کے ساتھ ان کی دیکھ بھال جاری رہے گی لیکن بی جے پی صرف چھیننا جانتی ہے۔ ہمارے فوجی جو سرحدوں پر اپنی جان ہتھیلیوں میں رکھ کر ملک کی حفاظت کرتے ہیں، ان کی معاشی سلامتی بھی ایک ایک کرکے چھینی جا رہی ہے۔

انہوں نے کہا، ’’کانگریس کا ماننا ہے کہ جن ملازمین نے ملک کی تعمیر میں تعاون کیا ہے انہیں پنشن ملنی چاہئے تاکہ وہ بڑھاپے میں بھی خود انحصار رہ سکیں۔ یہ ہر ملازم کا حق ہے۔ اس بات کو ذہن میں رکھتے ہوئے چھتیس گڑھ اور راجستھان کی کانگریس حکومتوں نے پرانی پنشن اسکیم کو نافذ کیا۔ پارٹی کا عزم ہے کہ حکومت بنتے ہی ہماچل پردیش اور گجرات میں بھی پرانی پنشن اسکیم کو نافذ کیا جائے گا۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔