جموں وکشمیر کے رام بن اور گاندربل میں مسلح جھڑپیں، 4 جنگجو ہلاک

جموں وکشمیر کے رام بن اور گاندربل اضلاع میں ہفتہ کے روز سیکورٹی فورسز اور جنگجوئوں کے درمیان ہونے والی دو جھڑپوں میں چار جنگجو مارے گئے

کشمیر میں انکاؤنٹر کی فائل تصویر
کشمیر میں انکاؤنٹر کی فائل تصویر
user

یو این آئی

سری نگر: جموں وکشمیر کے رام بن اور گاندربل اضلاع میں ہفتہ کے روز سیکورٹی فورسز اور جنگجوئوں کے درمیان ہونے والی دو جھڑپوں میں چار جنگجو مارے گئے۔ ادھر سری نگر کے نواح کدل میں مشتبہ جنگجوئوں نے مبینہ طور پر گرینیڈ پھینکا۔ تاہم یہ گرینیڈ پھٹنے سے رہ گیا۔

جموں وکشمیر پولس کے مطابق رام بن کے قصبہ بٹوت اور گاندربل کے جنگلی علاقہ ترنکھال میں ہفتہ کی صبح شروع ہونے والی مسلح جھڑپیں چار جنگجوئوں کی ہلاکت پر ختم ہوگئی ہیں۔ جھڑپوں کے دوران سیکورٹی فورسز کا کوئی نقصان نہیں ہوا ہے۔


جموں وکشمیر پولس کے آفیشل ٹویٹر ہینڈل پر تین مختلف ٹویٹس میں کہا گیا کہ جموں زون کے ضلع رام بن میں پانچ جنگجو پھنسے ہوئے تھے۔ پولس، آرمی اور سی آر پی ایف پر مشتمل سیکورٹی فورسز کی مشترکہ ٹیموں نے علاقے کو محاصرے میں لیا تھا۔ جنگجوئوں نے صبح کے وقت سیکورٹی فورسز کی ٹیم پر فائرنگ کی تھی اور فرار ہونے کی کوشش کی تھی'۔

پولس نے ٹویٹر پر مزید کہا تھا کہ موقع سے فرار ہونے کے بعد جنگجو قصبہ بٹوت میں ایک عام شہری کے گھر میں داخل ہوگئے۔ سینئر افسران آپریشن کی نگرانی کررہے تھے۔ تصادم کے دوران تین جنگجو مارے گئے۔ مکان کو مالک کو بچایا گیا۔


سری نگر میں قائم فوج کی پندرہویں کور نے گاندربل تصادم کے بارے میں اپنے ایک ٹویٹ میں کہا: 'آپریشن ترنکھال گاندربل۔ ایک جنگجو مارا گیا اور جنگی ساز و سامان برآمد کیا گیا۔ آپریشن جاری ہے'۔ یہ رپورٹ فائل کئے جانے تک مہلوک جنگجوئوں کی شناخت نہیں ہوئی تھی۔ پولس اور فوج نے کہا کہ وہ رام بن اور گاندربل مسلح جھڑپوں کے بارے میں تفصیلی بیانات جاری کریں گے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔