بابا رام دیو پر ایک اور مصیبت، این ایس یو آئی نے درج کرائی ایف آئی آر

این ایس یو آئی کے قومی صدر نیرج کندن کا کہنا ہے کہ ’’بابا رام دیو نے کورونا جنگجو اور اگلی صف کے سپاہی ڈاکٹروں کے وقار کو ٹھیس پہنچائی ہے جس کو کوئی بھی ہندوستانی برداشت نہیں کرے گا۔‘‘

رام دیو / تصویر سوشل میڈیا
رام دیو / تصویر سوشل میڈیا
user

تنویر

ایلوپیتھی طریقہ علاج کے خلاف بیان دینے کے بعد یوگا گرو بابا رام دیو کی مصیبتیں کم ہونے کا نام نہیں لے رہی ہیں۔ حالانکہ پتنجلی کے مالک رام دیو نے اپنے بیان کے لیے معافی مانگ لی، لیکن بعد میں مزید کچھ ایسے بیانات ان کے سامنے آئے جس نے ان کی پریشانیاں بڑھا دیں۔ کورونا ٹیکہ کاری کے تعلق سے ان کے بیان پر پہلے ہی آئی ایم اے (انڈین میڈیکل ایسو سی ایشن) نے سخت رخ اختیار کر رکھا ہے، اور اب نیشنل اسٹوڈنٹ یونین آف انڈیا (این ایس یو آئی) نے یوگا گرو سے صنعت کار بنے بابا رام دیو کے خلاف ایف آئی آر درج کرا دی ہے۔

این ایس یو آئی کے قومی صدر نیرج کندن کا ایک بیان سامنے آیا ہے جس میں انھوں نے کہا ہے کہ ’’بابا رام دیو نے کورونا جنگجو اور اگلی صف کے سپاہی ڈاکٹروں کے وقار کو ٹھیس پہنچائی ہے جس کو کوئی بھی ہندوستانی برداشت نہیں کرے گا۔ این ایس یو آئی بابا رام دیو کے اس (ایلوپیتھی طریقہ علاج والے) بیان کی سخت الفاظ میں مذمت کرتا ہے اور پولس سے ان کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کرتا ہے۔‘‘ بابا رام دیو کے خلاف این ایس یو آئی کے قومی سکریٹری ناگیش کریپّا نے ایف آئی آر درج کرائی ہے جس کے تحت مطالبہ کیا گیا ہے کہ ایسے لوگوں کو بغیر کارروائی کے چھوڑنا ڈاکٹروں کو ذلیل کرنے کے مترادف ہوگا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔