امرتسر: گولڈن ٹیمپل میں مبینہ طور پر دربار صاحب کی بے حرمتی کی کوشش، نوجوان کا پیٹ پیٹ کر قتل

پنجاب کے شہر امرتسر میں واقع سکھوں کے مذہبی مقام گولڈن ٹیمپل (سورن مندر) میں دربار صاحب کی مبینہ طور پر بے حرمتی کرنے کی کوشش کے الزام میں ایک شخص کو پیٹ پیٹ کر قتل کر دیا گیا

تصویر ٹوئٹر
تصویر ٹوئٹر
user

قومی آوازبیورو

نئی دہلی: پنجاب کے شہر امرتسر میں واقع سکھوں کے مذہبی مقام گولڈن ٹیمپل (سورن مندر) میں دربار صاحب کی مبینہ طور پر بے حرمتی کرنے کی کوشش کے الزام میں ایک شخص کو پیٹ پیٹ کر قتل کر دیا گیا۔ میڈیا پورٹ کے مطابق گولڈن ٹیمپل میں ایک نامعلوم شخص نے ریلنگ سے کود کر اندر جانے کی کوشش کی۔ یہ واقعہ اس وقت پیش آیا جب گرو گرنتھ صاحب کی تلاوت کی جا رہی تھی۔ اس شخص نے گرو گرنتھ صاحب کے سامنے رکھی تلوار اٹھانے کی کوشش کی لیکن ایس جی پی سی (سری گرودوارا پربندھک کمیٹی) کے خدمتگاروں نے اسے پکڑ لیا اور اس کی اطلاع پولیس کو دی گئی۔

ایس جی پی سی کے ارکان نے کہا کہ نوجوان نے واضح طور پر مندر میں بے حرمتی کی کوشش کی تھی اور یہ واقعہ سی سی ٹی وی کیمروں میں بھی قید ہوا ہے۔ رپورٹ کے مطابق نوجوان کی لاش کو اسپتال لے جایا گیا۔ وہیں، پولیس نے بھی اس واقعہ کی تصدیق کی ہے۔ امرتسر کے ڈپٹی پولیس کمشنر پرمندر سنگھ بھنڈال نے کہا کہ شام کے وقت عبادت کے وقت نوجوان نے دیوار سے کود کر مقدس مقام کی طرف جانے کی کوشش کی۔ اس وقت لوگ سنگت میں عبادت میں مشغول تھے اور سبھی اپنا سر جھکائے بیٹھے تھے۔


انہوں نے کہا نوجوان کی عمر 20 سے 25 سال کے درمیان بتائی جاتی ہے اور اس نے اپنے سر پر پیلا کپڑا باندھ رکھا تھا لیکن اندر محتاط خدمتگاروں نے اسے دبوچ لیا اور اسے گلیاروے سے باہر لے آئے۔ اس دوران وہاں مار پیٹ ہو گئی۔ بھنڈال کا کہنا ہے کہ ملزم شخص تنہا تھا اور سی سی ٹی وی فوٹیج کا معائنہ کر کے تفصیلی معلومات حاصل کی جا رہی ہے۔

ارد گرد کے کیمروں کی بھی جانچ کی جا رہی ہے۔ پولیس ٹیموں کو الرٹ پر رکھا گیا ہے۔ ملزم نوجوان کی لاش کا پوسٹ مارٹم اتوار کو کیا جائے گا۔ ملزم نوجوان کے رہائشی مقام اور دیگر تفصیلات معلوم کی جا رہی ہیں۔

بھاتیہ جنتاپارٹی کے لیڈر منجندر سنگھ سرسا نے امرتسر میں دربار صاحب میں ہوئے بے حرمتی کے واقعہ کی سخت مذمت کرتے ہوئے حکومت پنجاب سے اس کے پیچھے کی سازش کاپردہ فاش کرنے کامطالبہ کیا ہے۔ سرسا نے کہا کہ انہوں نے اس سلسلے میں مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ سے بھی بات کی ہے جنہوں نے اس واقعہ کی سازش کا پتہ لگانے کی یقین دہانی کرائی ہے۔


ی جے پی کے سکھ لیڈر نے کہا کہ انہوں نے اس معاملے کے بارے میں مرکزی وزیر داخلہ کو بھی آگاہ کر دیا ہے اور شاہ نے بھی اس واقعہ کی سخت مذمت کی ہے اور کہا ہے کہ وہ اس کے پیچھے چھپی سازش کو بے نقاب کرنے کے لئے اقدامات کریں گے۔ شاہ نے یہ بھی یقین دہانی کرائی ہے کہ وہ اس سلسلے میں وزیر اعلیٰ پنجاب سے بات کریں گے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔