افغانستان پر سلامتی اجلاس: اجیت ڈووال کی صدارت میں 8 ممالک کے قومی سلامتی کے مشیروں کی شرکت متوقع

اس اجلاس میں ہندستان، ایران اور روس سمیت 8 ممالک کے قومی سلامتی مشیر یا ان کے ہم منصب شرکت کریں گے۔ پاکستان اور چین نے خود کو اس اجلاس سے علیحدہ رکھا ہے

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

نئی دہلی: ’افغانستان کے حوالہ سے دہلی علاقائی سلامتی مذاکرات‘ کا انعقاد بدھ کے روز کیا جا رہا ہے۔ اس اجلاس میں ہندستان، ایران اور روس سمیت 8 ممالک کے قومی سلامتی مشیر یا ان کے ہم منصب شرکت کریں گے۔ پاکستان اور چین نے خود کو اس اجلاس سے علیحدہ رکھا ہے۔ سرکاری معلومات کے مطابق اس میٹنگ کی صدارت ہندستان کے قومی سیکورٹی کے مشیر اجیت ڈووال کریں گے۔

دہلی علاقائی سلامتی مذاکرات میں ایران، قزاکستان، کرغز جمہوریہ، روس، تاجکستان، ترکمانستان اور ازبکستان کے قومی سلامتی کے مشیر یا سلامتی کونسل کے سکریٹری شامل ہوں گے۔ اجلاس میں افغانستان کے حالیہ واقعات سے پیدا شدہ علاقائی سطح کے سیکورٹی سے متعلق حالات کا جائزہ لیا جائے گا اور سیکورٹی چیلنجز سے نمٹنے اور افغانستان میں امن، سیکورٹی اور استحکام کی خواہش کی حمایت کے اقدامات پر غور کیا جائے گا۔


ہندستان کے افغانستان کے لوگوں کے ساتھ بہت ہی دوستانہ اور مضبوط تعلقات رہے ہیں اور ہندستان نے افغانستان کے سامنے سلامتی اور انسانی چیلنجز کے حل کیلئے ایک مربوط بین الاقوامی اقدام کی اپیل کی ہے۔یہ میٹنگ اسی سمیت میں ایک مثبت پہل ہے۔ اس سے پہلے افغانستان پر علاقائی سیکورٹی مذاکرات کے دو ایڈیشن 2018اور 2019میں ایران میں منعقد کئے جاچکے ہیں۔

ذرائع کے مطابق اس میں پاکستان اور چین کو بھی مدعو کیا گیا تھا لیکن انہوں نے اس میں شرکت نہیں کرنے کا فیصلہ کیا۔ یا تو پاکستان افغانستان کے واقعات پر دیگرممالک کی سیکورٹی تشویشات کو شینئر نہیں کرتا ہے یا پھر اس کے خیالات دیگر ممالک کے خیالات سے مختلف ہیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔