جھاڑ کھنڈ اسمبلی میں نماز خانہ کے قیام کا خیر مقدم

مقررہ وقت میں نماز کی ادائیگی فرض ہے ایسے میں اگر ایک کمرہ یا مسجد تیار کی جاتی ہے تو اس میں حرج کیا ہے اور کسی کو بھی اس میں اعتراض نہیں ہونا چاہئے۔

فائل تصویر آئی اے این ایس
فائل تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

ممبئی مہاراشٹر سماجوادی پارٹی لیڈر اور رکن اسمبلی ابوعاصم اعظمی نے جھار کھنڈ اسمبلی میں مسجد اور نماز کا کمرہ مختص کئے جانے پر خیر مقدم کرتے ہوئے اسے ایک نیک عمل قرار دیا جبکہ بی جے پی کی نفرت کی سیاست کو ہدف تنقید بناتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بی جے پی ملک میں فرقہ پرستی چاہتی ہے۔انہوں نے کہا کہ جب کبھی بھی مسلمانوں کا مسئلہ آتا ہے ہندوؤں اورمسلمانوں کو منتشرکرنے کی کوشش کرتی ہے جس کا فائدہ الیکشن میں اٹھاتی ہے ۔

انہوں نے کہا کہ" میں کسی بھی مذہب کے خلاف نہیں ہوں مقررہ وقت میں نماز کی ادائیگی فرض ہے ایسے میں اگر ایک کمرہ یا مسجد تیار کی جاتی ہے تو اس میں حرج کیا ہے اور کسی کو بھی اس میں اعتراض نہیں ہے بی جے پی ایسے مسئلہ کو ہوا دیتی ہے ۔ "


انہوں نے کہا کہ جب میں پارلیمنٹ میں جایا کرتاتھا وہاں بھی کمرے میں نماز ادا کرتا تھا اورنماز کے لئے ہوائی اڈہ تک میں نماز خانہ ہے اگرکوئی پوجا کرنا اورنماز پڑھنا چاہتا ہے تو اس کے لئے انتطام کرنا اچھی بات ہے اس میں سیاست نہیں ہو نی چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم سب کو ایک دوسرے کے جذبات اور مذہب کا احترام کرنا چاہئے ۔ بی جے پی تقسیم چاہتی ہے ہم اس ملک میں بھائی چارگی اور اتحاد کے خواہاں ہیں ۔ بے روزگاری پر کوئی بات نہیں کی جاتی مذہب کے نام پر نفرت پیدا کرکے اختلافات پیدا کرتی ہے بی جے پی یہ اسکی گندی ذہنیت اور سیاست ہے ۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔