بیٹی کی تھی خواہش، بیٹا پیدا ہونے پر ماں نے نوزائیدہ کا کر دیا قتل

ایس ڈی اوپی بگھیل نے بتایا کہ جسمانی معائنے میں خاتون پوری طرح دماغی طور صحت مند پائی گئی اور جس سے پتہ چلا کہ اس نے قصداً بیٹے کا قتل کیا۔ اس کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کرکے اسے گرفتارکرلیا گیا ہے۔

علامتی تصویر
علامتی تصویر
user

یو این آئی

بڑوانی: عموماً بیٹے کی خواہش رکھنے والے معاملے سامنے آتے ہیں، لیکن مدھیہ پردیش کے ضلع بڑوانی کے جلوانیہ تھانہ علاقہ میں اس کے برعکس ایک عجیب وغریب معاملہ سامنے آیا جہاں بیٹی پیدا نہ ہونے سے ناراض خاتون نے اپنے نوازئیدہ بیٹے کو کنویں میں پھینک کرمارڈالا۔

اس واقعہ کے تعلق سے راج پور کے سب ڈویژن پولیس افسر پدم سنگھ نے بتایا کہ جلوانیا تھانہ علاقہ میں ٹھانسانگوی گاؤں کی 28 سال للتابائی کواس کے نوزائیدہ بیٹے کے قتل کے الزام میں کل شب گرفتارکرلیا گیا۔انہوں نے بتایا کہ للتابائی اوراس کے شوہر کالو کے پہلے سے ایک 4 سالہ اوردوسالہ بیٹے ہیں۔ اسے حاملہ ہونے پر بیٹی کی خواہش تھی، لیکن ایک ہفتہ قبل اسے ایک بار پھر بیٹا پیداہوگیا۔


بیٹاپیداہونے سے خاتون پریشان ہوگئی اورگھروالوں کو یہ کہنے لگی کہ وہ بیٹی کی توقع کررہی تھی اوربیٹانہیں چاہتی اسے نہرمیں پھینک دے گی۔خاندان والوں نے اسے بہت سمجھایا لیکن وہ نہیں مانی اوراس نے اپنے نوزائیدہ کو دودھ پلانا بھی شروع نہیں کیا۔ مہاراشٹر کے پونے میں کاریگر کاکام کرنے والے اس کے شوہرکالو کے سمجھانے پر بھی وہ نہیں مانی۔ 15 مئی کو وہ اپنے بیٹے کو لے کر نکلی اوراسے گھر سے ایک کلومیٹر دورکھیت میں بنے ہوئے کنویں میں پھینک دیا۔ اس کے بعد وہ خود بھی اس میں کود گئی۔واقعہ کے سبب اس کے بیٹے کی موت ہوگئی لیکن پانی کم ہونے کی وجہ سے ماں دیہی باشندوں کے ذریعہ بچالی گئی۔ ایس ڈی اوپی بگھیل نے بتایا کہ جسمانی معائنے میں وہ پوری طرح دماغی طور صحت مندپائی گئی اور اس نے جان بوجھ کر یہ کام کیا ہے۔ اس لئے کل اس کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کرکے اسے گرفتارکرلیا گیا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔