بہار: مدھوبنی میں کچھ یوں تیار کی گئی صحافی اویناش جھا کے قتل کی سازش...

بہار کی مدھوبنی پولیس نے ایک مقامی صحافی اویناش جھا کے قتل کے سلسلے میں چھ لوگوں کو گرفتار کیا ہے۔ متوفی اویناش جھا ایک ہندی روزنامہ میں کام کرتا تھا۔

لاش، علامتی تصویر آئی اے این ایس
لاش، علامتی تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

بہار کی مدھوبنی پولیس نے ایک مقامی صحافی اویناش جھا کے قتل معاملے میں چھ لوگوں کو گرفتار کیا ہے۔ مہلوک اویناش کے بارے میں بتایا جاتا ہے کہ وہ ایک ہندی روزنامہ میں کام کرتے تھے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ اویناش مبینہ طور ایک شادی شدہ خاتون کے ساتھ ناجائز رشتے میں تھا، جس کی شناخت پورن کلا دیوی کی شکل میں ہوئی ہے۔ اویناش کے قتل کی سازش اس کے شوہر نے تیار کی تھی۔

اویناش کے لاپتہ ہونے کے بعد والد دیانند جھا اور بھائی چندرشیکھر جھا نے بینی پٹی تھانے میں گمشدگی کی شکایت درج کرائی تھی۔ انھیں اندیشہ تھا کہ صحافی کا اغوا کر لیا گیا ہے۔ مدھوبنی ضلع کے بینی پٹی رینج کے ایس ڈی پی او ارون کمار سنگھ نے کہا کہ ’’اویناش جھا موبائل فون پر پورن کلا کے ساتھ چیٹنگ کیا کرتے تھے۔ ہم نے مہلوک کے فون کال کی تفصیلات جانچ کی ہے جس میں اس نے بینی پٹی تھانے کے انترولی گاؤں کی باشندہ پورن کلا دیوی کو بار بار فون کیا تھا۔ بعد ازاں ہم نے اسے پوچھ تاچھ کے لیے حراست میں لیا ہے۔ وہ پوچھ تاچھ کے دوران ٹوٹ گئی اور واقعات کے تعلق سے کچھ انکشافات کیے۔‘‘


پورن کلا نے بتایا کہ وہ جمعرات کو اویناش سے ملی تھیں اور بینی پٹی کے کٹیا روڈ پر ایک مقامی کلنک انوراگ ہیلتھ کیئر گئے۔ جب وہ کلینک سے باہر آئے تو ان کے شوہر جے رام پاسوان سمیت پانچ لوگوں نے اویناش کا اغوا کر لیا اور انھیں ایک نامعلوم جگہ پر لے گئے۔

اویناش جھا کی لاش ہفتہ کے روز بینی پٹی ڈویژن میں ایک سوتی بیگ میں ملی تھی۔ دیگر ملزمین کی شناخت پورن کلا کے شوہر جے رام پاسوان کے علاوہ روشن کمار شاہ، بٹو کمار پنڈت، دیپک کمار پنڈت اور منیش کمار کی شکل میں ہوئی ہے۔ ایس ڈی پی او نے کہا کہ ’’ملزمین پر قتل، مجرمانہ سازش اور اغوا سے متعلق تعزیرات ہند کی دفعات کے تحت معاملہ درج کیا جا رہا ہے۔ آگے کی جانچ جاری ہے۔‘‘

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔