کورونا وائرس کی دوسری لہر میں اب تک 420 ڈاکٹروں کی موت: آئی ایم اے

انڈین میڈیکل ایسو سی ایشن کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کی دوسری لہر میں اب تک 420 ڈاکٹروں کی موت ہو چکی ہے اور سب سے زیادہ 100 ڈاکٹرس صرف دہلی میں ہلاک ہوئے ہیں۔

تصویر یو این آئی
تصویر یو این آئی
user

قومی آوازبیورو

ہندوستان میں کورونا کی دوسری لہر کے دوران بڑی تعداد میں ڈاکٹروں کی موت ہوئی ہے۔ یہ جانکاری ڈاکٹروں کے ادارہ انڈین میڈیکل ایسو سی ایشن (آئی ایم اے) نے دی ہے۔ آئی ایم اے نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ کورونا وائرس کی دوسری لہر میں کورونا سے 420 ڈاکٹروں کی جان گئی ہے، اس میں دہلی کے 100 ڈاکٹرس بھی شامل ہیں۔ اس کے بعد سب سے زیادہ بہار میں 96 ڈاکٹروں نے اپنی جان گنوائی ہے۔

یہاں قابل ذکر ہے کہ آئی ایم اے نے دو دن قبل یعنی جمعرات کو کہا تھا کہ ملک میں کورونا وائرس وبا کی دوسری لہر میں 329 ڈاکٹروں کی موت ہوئی ہے جن میں سب سے زیادہ 80 ڈاکٹروں نے بہار میں جان گنوائی۔ آئی ایم کے مطابق بہار کے 80 ڈاکٹروں کے علاوہ دہلی میں 73، اتر پردیش میں 41، آندھرا پردیش میں 22 اور تلنگانہ میں 20 ڈاکٹروں کی موت ہوئی۔ آئی ایم اے کے تازہ اعداد و شمار کے بعد پتہ چلتا ہے کہ گزشتہ دو دنوں میں ہی ملک میں 91 ڈاکٹروں کی موت ہو گئی۔


غور طلب ہے کہ ہندوستان میں کورونا کے نئے معاملے میں کمی ضرور درج کی گئی ہے، لیکن اب بھی یہ روزانہ 2.5 لاکھ سے زائد ہے۔ ہفتہ کے روز پیش کردہ اعداد و شمار کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹے میں کورونا کے 2 لاکھ 57 ہزار 299 نئے معاملے سامنے آئے ہیں۔ 21 اپریل کے بعد یہ 24 گھنٹوں میں سب سے کم معاملے ہیں۔ گزشتہ 24 گھنٹے میں کورونا وبا سے 4 ہزار 194 لوگوں کی موت بھی واقع ہو گئی جو فکر انگیز ہے۔ گزشتہ کچھ دنوں سے روزانہ 4 ہزار سے زائد مریضوں کی موت ہو رہی ہے جس سے لوگوں میں خوف پھیلا ہوا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔