واجپئی کی یاد میں 100 روپے کا سکہ جاری

گزشتہ سال وزارت خزانہ نے 100 روپے کے نئے سکّے کے بارے میں نوٹیفکیشن جاری کی تھی۔ اس سکے کا وزن 35 گرام اور نصف قطر 2.2 سینٹی میٹر ہوگی۔

قومی آوازبیورو

نئی دہلی: 24 دسمبر کو آنجہانی سابق وزیراعظم اٹل بہاری واجپئی کی یادمیں 100 روپے کا یادگاری سکہ جاری کیا گیا۔ پارلیمنٹ کی انیکسی میں ایک پروگرام کے دوران وزیر ثقافت مہیش شرما کی موجودگی میں وزیر اعظم نریندر مودی نے یہ سکہ جاری کیا۔اس موقع پر واجپئی کے ساتھ کافی طویل عرصے تک کام کرنے والے سینئر بی جےپی لیڈر لال کرشن اڈوانی ،لوک سبھا اسپیکر سمترا مہاجن ،وزیر خزانہ ارون جیٹلی ،پارٹی کے صدر امت شاہ اور واجپئی کے لواحقین بھی موجودتھے۔

قابل ذکر ہے کہ 25 دسمبر کو اٹل بہاری واجپئی کی سالگرہ ہے اور اس سے ایک دن قبل یہ 100 روپے کا سکہ جاری کیا گیا ہے۔ 25 دسمبر یعنی منگل کو مودی حکومت نے ’گڈ گورننس دن‘ کے طور پر منائے جانے کا بھی اعلان کیا۔ واضح رہے کہ گزشتہ سال وزارت خزانہ نے 100 روپے کے نئے سکّے کے بارے میں نوٹیفکیشن جاری کی تھی۔ اس سکے کا وزن 35 گرام اور نصف قطر 2.2 سینٹی میٹر ہوگی۔ یہ 50 فیصد چاندی، 40 فیصد تامبا، پانچ فیصد نکل اور پانچ فیصد جستے کا بنا ہوگا۔ سکہ کے سامنے اشوک ستون ہوگا جس کے نیچے ’ستیہ میتو جیتے‘ لکھا ہوگا۔سرکل پر بائیں طرف ہندی میں ’بھارت‘اور داہنی طرف انگریزی میں ’انڈیا‘ لکھا ہوگا۔اشوک ستون کے نیچے روپے کا علامتی نشان اور انگریزی کے نمبر میں ’100‘لکھا ہوگا۔ سکہ کے پیچھے کی طرف مسٹر واجپئی کی تصویر ہوگی۔اوپر کے سرکل پر دائیں طرف ہندی میں اور دائیں طرف انگریزی میں’اٹل بہاری واجپئی ‘لکھا ہوگا۔ سرکل کے نچلے حصے میں انگریزی میں ’1924‘اور ’2018‘لکھا ہوگا ۔ دراصل اٹل بہاری واجپئی کی پیدائش 25دسمبر 1924کو ہوئی تھی اور رواں سال 16دسمبر کو ان کا انتقال ہوگیا تھا۔

Published: 24 Dec 2018, 9:39 AM