پنج شیر کی راجدھانی پر طالبان کا قبضہ: افغان میڈیا

افغان میڈیا کا کہنا ہے کہ دو طرفہ لڑائی میں مقامی ملیشیا کے ترجمان فہیم دشتی مقابلے میں مارے گئے ہیں، جب کہ گورنر ہاؤس اور پولیس ہیڈ کوارٹرز طالبان کے کنٹرول میں ہیں۔

تصویر آئی اے این ایس
تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

کابل: طالبان نے وادیٔ پنج شیر کی راجدھانی، گورنر ہاؤس اور پولیس ہیڈ کوارٹر پر قبضہ کرلیا ہے۔ افغان میڈیا کے مطابق طالبان نے شمالی اتحاد کے گڑھ وادیٔ پنج شیر کے دارالحکومت پر قبضہ کرلیا ہے۔ افغان میڈیا کا کہنا ہے کہ دو طرفہ لڑائی میں مقامی ملیشیا کے ترجمان فہیم دشتی مقابلے میں مارے گئے ہیں، جب کہ گورنر ہاؤس اور پولیس ہیڈ کوارٹرز طالبان کے کنٹرول میں ہیں۔

اس سے قبل یہ خبر سامنے آئی تھی کہ شمالی اتحاد اور طالبان کے درمیان جنگ بندی کا امکان ہے اور اس حوالے سے شمالی اتحاد کے سربراہ احمد مسعود نے طالبان کے ساتھ مذاکرات پر مشروط آمادگی بھی ظاہر کی ہے۔ طالبان ذرائع کے مطابق لڑائی کے دوران احمد مسعود کے ترجمان فہیم دشتی سمیت چار اہم کمانڈر مارے گئے۔


فہیم دشتی احمد مسعود کا قریبی ساتھی اور ڈاکٹر عبد اللہ عبد اللہ کا بھانجہ تھا، افغان میڈیا کے مطابق فہیم دشتی کے ہمراہ مزاحمتی فورس کے اہم کمانڈر جنرل عبدالودود بھی ہلاک ہوگئے ہیں۔ افغان میڈیا نے دعویٰ کیا ہے کہ دو اہم کمانڈر گل حیدر خان اور منیب امیری بھی لڑائی کے دوران مارے گئے۔ طالبان نے پنج شیر کے گورنر ہاؤس اور پولیس ہیڈ کوارٹرز سمیت تمام 7 اضلاع پر قبضے کا دعویٰ کیا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔