امریکہ اور روس کے تعلقات خطرناک ٹکراؤ کے مقام پر، روس کا اعتراف

روس نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ امریکہ کا رخ بین الاقوامی قانون کی سراسرخلاف ورزی کرتا ہے اوراس کی سخت مخالفت کی جائے گی، روس اپنے جائز مفادات برقرار رکھے گا۔

علامتی تصویر
علامتی تصویر
user

یو این آئی

ماسکو: روس نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ اس کے اور امریکہ کے درمیان تعلقات’خطرناک ٹکراؤ کے مقام‘ پر پہنچ گیا ہے اورواشنگٹن اس پر مستقل نظامی دباؤ بنانے کی کوشش کررہا ہے۔ روسی وزارت خارجہ کے کالجیم کی میٹنگ کے بعد بدھ کو اس کی جانب سے ایک بیان میں کہا گیا کہ امریکہ کی حرکتوں کے سبب حالیہ برسوں میں روس اور امریکہ کے مابین تعلقات خراب ہورہے ہیں۔ روس پرامریکہ اوراس کے ساتھی ممالک نظامی دباؤ بنارہے ہیں، جو کافی حد تک نظریاتی عوامل سے متاثرہیں۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ امریکہ کا رخ بین الاقوامی قانون کی سراسرخلاف ورزی کرتا ہے اوراس کی سخت مخالفت کی جائے گی۔ روس اپنے جائز مفادات برقرار رکھے گا۔ وزارت کے مطابق جینیوا میں روسی صدر ولادیمیر پوتن اوران کے امریکی ہم منصب جو بائڈن کے درمیان جون میں ہوئی چوٹی کانفرنس سے یہ پتہ چلا کہ دونوں ممالک کے درمیان اسٹریٹجک استحکام، موسمیاتی تبدیلی، سائبر سیکورٹی اور علاقائی تنازعات کے حل جیسے شعبوں میں تعمیری بات چیت کو دوبارہ زندہ کرنے کے مواقع تھے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔