فلپائن میں صدارتی انتخاب کے دوران گولی باری، 3 افراد ہلاک

فوج نے بتایا کہ دو وین میں سوار حملہ آوروں نے بلوان شہر میں ووٹنگ کے عمل میں مدد کر رہے فوجیوں پر صبح تقریباً 7.25 بجے گولیاں چلائیں۔

فلپائن، تصویر آئی اے این ایس
فلپائن، تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

فلپائن میں صدارتی انتخاب کے لیے جاری ووٹنگ کے درمیان پیر کو ماگوئنداناؤ شہر میں ایک ووٹنگ مرکز کے پاس گولی باری کے واقعہ میں تین لوگوں کی موت ہو گئی اور ایک کے زخمی ہونے کی خبر ہے۔ انتخابی کمیشن نے بیسلن علاقہ کے سمیسپ شہر میں بھی صبح ایک گولی باری کے واقعہ کی اطلاع دی۔ انتخابی کمیشن نے کہا کہ حملے میں کوئی ہلاکت نہیں ہوئی ہے۔

خبر رساں ایجنسی سنہوا کی رپورٹ کے مطابق فوج نے کہا کہ دو وین میں سوار حملہ آوروں نے بلوان شہر میں ووٹنگ کے عمل میں مدد کر رہے فوجیوں پر صبح تقریباً 7.25 بجے گولیاں چلائیں۔ فوج کے مطابق متاثرہ شہر میں میئر کے لیے انتخاب لڑ رہے ایک مقامی سیاسی لیڈر کا حامی تھا۔


اس سے قبل پیر کو پولیس نے بتایا کہ انتخاب سے قبل یعنی اتوار کی شب مگوئنداناؤ شہر میں گرینیڈ دھماکہ میں کم از کم آٹھ لوگ زخمی ہو گئے۔ پولیس نے کہا کہ دھماکہ داتو انسے شہر میں ہوا جب کہ دوسرا دھماکہ شریف اگواک شہر کے پاس ہوا۔ کسی بھی گروپ نے دھماکوں کی ذمہ داری نہیں لی ہے۔

پولیس ’ہاٹ اسپاٹ‘ کی شکل میں نشان زد علاقوں میں حملوں کی جانچ کر رہی ہے۔ افسران نے کہا کہ ان علاقوں میں ہوئے تشدد سے ووٹنگ کا عمل رخنہ انداز نہیں ہوا۔ 65.7 ملین سے زیادہ فلپائن کے باشندے پیر کو ایک نئے صدر، نائب صدر، 12 سینیٹرس، ہاؤس آف ریپریزنٹیٹوس کے 300 سے زائد اراکین اور 17000 سے زائد مقامی افسران کا انتخاب کرنے کے لیے ووٹنگ کرنے کے اہل ہیں۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔