ہاکی: آسٹریلیا کے خلاف چار سال کی جیت کی خشک سالی ختم کرنے اترے گا ہندوستان

ہندوستانی ہاکی ٹیم كلنگا اسٹیڈیم میں جب دنیا کی دوسرے نمبر کی ٹیم آسٹریلیا کے خلاف اترے گی تو اس کا مقصد آسٹریلیا کے خلاف گزشتہ چار سال کی جیت کی خشک سالی کو ختم کرنا ہوگا

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

بھونیشور: ایف آئی ایچ پرو لیگ میں مسلسل شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کر نے والی ہندستانی ہاکی ٹیم 21-22 فروری کو یہاں كلنگا اسٹیڈیم میں جب دنیا کی دوسرے نمبر کی ٹیم آسٹریلیا کے خلاف اترے گی تو اس کا مقصد آسٹریلیا کے خلاف گزشتہ چار سال کی جیت کی خشک سالی کو ختم کرنا ہوگا۔

ہندستان اور آسٹریلیا کے درمیان 2013 سے اب تک کل 30 میچ کھیلے گئے ہیں جس میں آسٹریلیا نے 22 میچ جیتے ہیں اور اس نے 2016 میں آسٹریلیا کے بیڈنگو میں کھیلے گئے ٹیسٹ میچ میں شکست کے بعد ہندستان کے ہاتھوں کوئی میچ نہیں ہارا ہے۔ ہندستان نے تب وہ مقابلہ وی رگھوناتھ کے دو گولوں کی بدولت 3-2 سے جیتا تھا۔

ہندستان نے ان 30 مقابلوں میں کل چھ میچ جیتے ہیں لیکن یہ تمام جیت 2016 سے پہلے کی تھی۔ دو میچ ڈرا رہے ہیں۔ ہندستان نے اس دوران 47 اور آسٹریلیا نے 93 گول کئے ہیں۔ پرو لیگ میں پہلی بار کھیل رہے ہندستان نے اس ٹورنامنٹ میں اب تک شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا ہے جس کی بدولت وہ عالمی رینکنگ میں پانچویں سے چوتھے نمبر پر پہنچ گیا ہے۔ ہندستان نے اپنے پہلے مقابلوں میں دنیا کی تیسرے نمبر کی ٹیم ہالینڈ کو شکست دی۔ ہندستان نے پھر دنیا کی نمبر ایک ٹیم اور عالمی چمپئن بیلجیم کو پہلے میچ میں 2-1 سے شکست دی لیکن دوسرے میچ میں اسے بیلجیم سے 2-3 سے نزدیکی شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ ہندستان کا اب سامنا دنیا کی دوسرے نمبر کی ٹیم آسٹریلیا سے ہوگا۔

سابق آسٹریلیا ئی کھلاڑی گراہم ریڈ ہندستان کے کوچ ہیں اور ان کی رہنمائی میں ہندستانی ٹیم حالیہ برسوں کا اپنا سب سے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کر رہی ہے۔ اگرچہ آسٹریلیا کے كلنگا اسٹیڈیم میں شاندار ریکارڈ ہے جہاں اس نے 2014 میں چمپئنز ٹرافی کے سیمی فائنل میں جرمنی کے ہاتھوں شکست کے بعد سے باقاعدہ وقت میں کوئی میچ نہیں ہارا ہے۔

آسٹریلوی ٹیم نے ناقابل شکست رہتے ہوئے 2017 ہاکی ورلڈ لیگ فائنل میں تمام چھ میچ جیت کر فائنل میں داخلہ حاصل کرنے کے ساتھ ساتھ خطاب اپنے نام کیا تھا۔ آسٹریلیا نے ورلڈ کپ 2018 میں بھی چھ میں سے پانچ میچ جیتے تھے۔ اس ہالینڈ نے سیمی فائنل میں مقررہ وقت میں مقابلہ 2-2 سے برابر رہنے کے بعد شوٹ آؤٹ میں ہرایا تھا۔ بین الاقوامی ہاکی فیڈریشن کی موجودہ درجہ بندی میں ہندستان چوتھے اور آسٹریلیا دوسرے نمبر پر ہے۔ ایف آئی ایچ پرو لیگ 2019 میں آسٹریلیا پہلے نمبر پر تھا جبکہ ہندستان نے اس ٹورنامنٹ میں حصہ نہیں لیا تھا۔ موجودہ ایف آئی ایچ ہاکی پرو لیگ کی ٹیبل میں ہندستان تیسرے اور آسٹریلیا پانچویں نمبر پر ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔