یوم جمہوریہ پر ٹیم انڈیا کا ہندوستانی شائقین کو جیت کا تحفہ

ہندوستان نے نیوزی لینڈ کو دوسرے ٹی -20 میچ میں اتوار کو سات وکٹ سے شکست دے کر ملک کو یوم جمہوریہ پر فتح کا شاندار تحفہ دے دیا اور پانچ میچوں میں 2-0 کی برتری حاصل کرلی۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

آکلینڈ: لیفٹ آرم اسپنر رویندر جڈیجہ (18 رن پر دو وکٹ) کی کسی ہوئی گیند بازی اور فارم میں چل رہے اوپنر لوکیش راہل (ناٹ آؤٹ 57) اور شريس ایر (44) کی بہترین اننگز سے ہندوستان نے نیوزی لینڈ کو دوسرے ٹی -20 میچ میں اتوار کو سات وکٹ سے شکست دے کر ملک کو یوم جمہوریہ پر فتح کا شاندار تحفہ دے دیا اور پانچ میچوں میں 2-0 کی برتری حاصل کرلی۔

ہندوستان نے نیوزی لینڈ کو پانچ وکٹ پر 132 رن کے معمولی اسکور پر روکنے کے بعد 17.3 اوور میں تین وکٹ پر 135 رنز بنا کر آسانی سے میچ جیت لیا۔ راہل نے سیریز میں مسلسل دوسری نصف سنچری بنائی جبکہ ایئر نے ایک بار پھر شاندار اننگز کھیلی۔ راہل نے 50 گیندوں میں تین چوکوں اور دو چھکوں کی مدد سے ناقابل شکست 57 رنز کی میچ فاتح اننگز کھیلی۔ پہلے میچ میں بڑے اسکور والے میچ میں بلے بازوں نے ہندوستان کی جیت میں اہم کردار ادا کیا جبکہ اس مقابلے میں بولر چھا گئے۔ تعریف کرنی ہوگی لیفٹ آرم اسپنر جڈیجہ کی جنہوں نے کیوی بلے بازوں کو کھل کر کھیلنے کا کوئی موقع نہیں دیا۔ میزبان ٹیم کو 132 کا اسکور ایسا نہیں تھا کہ ہندوستانی بلے بازوں کو کوئی پریشانی ہو پاتی۔

اگرچہ ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے ہندوستان نے اوپنر روہت شرما کی خدمات کو پہلے اوور کی آخری گیند پر گنوا دیا۔ روہت مسلسل دوسرے میچ میں ناکام رہے اور سستے میں آؤٹ ہوئے۔ روہت نے چھ گیندوں میں دو چوکوں کے سہارے آٹھ رن بنائے اور انہیں ٹم ساؤتھی نے آؤٹ کیا۔ راہل نے اپنے کپتان وراٹ کوہلی کے ساتھ دوسرے وکٹ کے لئے 31 رن کی ساجھیداری کی۔ وراٹ 12 گیندوں میں 11 رنز بنا کر ساؤتھی کا دوسرا شکار بنے۔ گزشتہ میچ میں نصف سنچری بنانے والے راہل اور ایئر نے تیسرے وکٹ کے لئے 86 رن جوڑ کر ہندوستان کو فتح کی دہلیز پر پہنچا دیا۔

ائر 17 ویں اوور میں ٹیم کے 125 کے اسکور پر آؤٹ ہوئے۔ ایئر کو لیگ اسپنر ایش سوڈھی نے آؤٹ کیا۔ ایر کا کیچ ساؤتھی نے لپكا ، ايئر نے 33 گیندوں پر 44 رن میں ایک چوکا اور تین چھکے لگائے۔ راہل نے شوم دوبے کے ساتھ ہندوستان کو اگلے اوور میں جیت کی منزل پر پہنچا دیا۔ دوبے نے ساؤتھی پر چھکا مار کر میچ ختم کر دیا ۔راہل 57 اور دوبے آٹھ رن پر ناٹ آؤٹ رہے۔ راہل پلیئر آف دی میچ رہے۔ میزبان کے لئے ساؤتھی نے 20 رن پر دو وکٹ اور ایش سوڈھی نے 33 رن پر ایک وکٹ لیا۔

اس سے پہلے نیوزی لینڈ نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کرنے کا فیصلہ کیا۔ نیوزی لینڈ نے اسی میدان پر پہلے مقابلے میں 203 کا اسکور بنایا تھا لیکن اس بار میزبان ٹیم 132 تک ہی پہنچ پائی۔ جڈیجہ نے انتہائی کنجوسی کے ساتھ سدھی ہوئی گیند بازی کرتے ہوئے چار اوور میں صرف 18 رنز دے کر دو وکٹ لئے۔ تیز گیند باز شاردل ٹھاکر نے دو اوور میں 21 رن پر ایک وکٹ، جسپريت بمراه نے چار اوور میں 21 رن پر ایک وکٹ اور شوم دوبے نے دو اوور میں 16 رن پر ایک وکٹ لیا۔

نیوزی لینڈ نے چھ اوور کے پاورپلے میں 48 رن جوڑ کر اچھی شروعات کی لیکن جڈیجہ کی کسی ہوئی بولنگ نے کیوی بلے بازوں کو باندھ کر رکھ دیا۔ جڈیجہ نے کیوی کپتان کین ولیمسن (14) اور کولن ڈی گرینڈهوم (3) کے وکٹ لئے۔ ٹھاکر نے اوپنر مارٹن گپٹل کو آؤٹ کیا۔ گپٹل نے 20 گیندوں پر 33 رنز میں چار چوکے اور دو چھکے لگائے۔

کولن منرو کو دوبے نے اپنا شکار بنایا۔ منرو نے 25 گیندوں پر 26 رن میں دو چوکے اور ایک چھکا لگایا۔ بمراه نے راس ٹیلر کو آؤٹ کیا۔ ٹیلر نے 24 گیندوں پر 18 رن بنائے لیکن اس میں کوئی باؤنڈری نہیں تھی۔ وکٹ کیپر ٹام سیفرٹ نے 26 گیندوں پر ایک چوکے اور دو چھکے کے سہارے ناٹ آؤٹ 33 رنز بنا کر اپنی ٹیم کے اسکور کو کچھ احترام دیا۔