موت سے پہلے شین وارن نے بنایا تھا خاص منصوبہ، سی سی ٹی وی فوٹیج سے انکشاف

ایک خاتون کو وارن کو فوٹ مساج دینے کے لیے جانا تھا لیکن جب اس نے کمرے کا دروازہ کھٹکھٹایا تو کسی نے دروازہ نہیں کھولا، فوٹیج میں صاف نظر آ رہا ہے کہ چار خواتین ریسورٹ پہنچی تھیں لیکن وہ واپس لوٹ گئیں۔

شین وارن، تصویر آئی اے این ایس
شین وارن، تصویر آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

آسٹریلیا کے سابق کرکٹر شین وارن کی موت گزشتہ 4 مارچ کو ہوئی تھی، لیکن ابھی تک ان سے متعلق طرح طرح کی خبریں سامنے آ رہی ہیں۔ اب پتہ چلا ہے کہ انھوں نے اپنی موت سے پہلے کچھ خاص منصوبہ بنایا تھا جس کے بارے میں سی سی ٹی وی فوٹیج سے جانکاری ملی ہے۔ فوٹیج کے مطابق جمعہ کو ہی شین وارن اور ان کے دوستوں کو مساج دینے کے لیے تھائی لینڈ کی چار خواتین آئی تھیں، لیکن اس وقت تک وارن کے انتقال کی بات سامنے آ گئی اور انھیں واپس لوٹنا پڑا تھا۔ یعنی جو منصوبہ شین وارن نے بنایا تھا وہ پورا نہیں ہو سکا۔

’ڈیلی میل‘ کی ایک رپورٹ کے مطابق جو سی سی ٹی وی فوٹیج سامنے آئی ہے وہ اسی ریسورٹ کی ہے جہاں وارن رکے ہوئے تھے۔ جانکاری کے مطابق ایک خاتون کو وارن کو فوٹ مساج دینے کے لیے جانا تھا لیکن جب اس نے کمرے کا دروازہ کھٹکھٹایا تو کسی نے دروازہ نہیں کھولا۔ فوٹیج میں صاف دکھائی دے رہا ہے کہ چار خواتین ریسورٹ پہنچی تھیں لیکن وہ واپس لوٹ گئیں۔


رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ واقعہ لاش ملنے سے کچھ منٹ پہلے کا ہے۔ ان چار خواتین کا کہنا ہے کہ انھیں پانچ بجے کا اپوائنٹمنٹ ملا تھا۔ شین وارن اور ان کے دوستوں نے انھیں مساج، فوٹ مساج اور نیل ٹریٹمنٹ کے لیے بلایا تھا۔ دروازے پر کوئی جواب نہیں ملا تو اس خاتون نے باس کو میسج بھیجا اور بتایا کہ وارن دروازہ نہیں کھول رہے ہیں۔ رپورٹ میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ دو خواتین شین وارن کے کمرے تک گئی تھیں۔ پولیس کا ماننا ہے کہ انہی دو خواتین نے وارن کو آخری بار زندہ دیکھا تھا۔ وارن سے متعلق پولیس نے جو بیان دیا ہے اس میں انھوں نے کہا ہے کہ وارن کا انتقال 5.15 بجے کے آس پاس ہوا تھا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔