عالمی کپ میں جان بوجھ کر خراب کھیلے سینئر کھلاڑی، کپتان گلبدین نائب کا انکشاف

عالمی کپ کرکٹ میں افغانستان کے کپتان گلبدین نائب نے اپنی ٹیم کے سینئر کھلاڑیوں پر ایک سنسنی خیز الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ وہ عالمی کپ میں جان بوجھ کر خراب کھیلے تھے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

حال ہی میں اختتام پذیر ہوئے کرکٹ عالمی کپ میں افغانستان کی ٹیم نے کوئی میچ تو نہیں جیتا لیکن انہوں نے اپنی کارکردگی سے دل خوب جیتے۔ عالمی کپ میں ان سے کچھ بڑا کرنے کی زیادہ امید نہیں تھی لیکن ایسی بھی امید نہیں تھی کہ ٹیم ایک بھی میچ نہیں جیت پائے گی۔

اب جو عالمی کپ میں کپتان گلبدین نائب کے تعلق سے خبر آ رہی ہے اس نے پوری کرکٹ دنیا میں سنسنی پھیلا دی ہے۔ جہاں اوپنر شہزاد نے خود کو پوری طرح فٹ بتاتے ہوئے عالمی کپ سے باہر کر دینے کا الزام ٹیم انتظامیہ پر لگایا ہے وہیں کپتان گلبدین نائب نے الزام لگایا ہے کہ عالمی مقابلوں کے دوران ٹیم کے سینئر کھلاڑی سنجیدہ نہیں تھے۔

عالمی کپ کے دوران افغانستان ٹیم کے کپتان گلبدین نائب تھے اور انہوں نے سینئر کھلاڑیوں پر الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ انہوں نے مشکل وقت میں ساتھ نہیں دیا اور وہ جان بوجھ کر خراب کھیلے۔ واضح رہے کہ عالمی کپ سے ٹھیک پہلے انہیں ٹیم کا کپتان بنایا گیا تھا لیکن اب ان کی جگہ راشد خان کو کپتان بنا دیا گیا ہے۔

گلبدین نائب نے مزید الزام لگایا کہ میچ ہارنے کے بعد کھلاڑیوں کے چہروں سے اظہار افسوس کی بجائے ہنستے ہوئے نظر آتے تھے۔ انہوں نے مزید کہا کہ وہ جب گیند بازوں سے گیند بازی کے لئے کہتے تھے تو وہ ان کی جانب دیکھتے بھی نہیں تھے اور کھلاڑی ان کے ساتھ بالکل تعاون نہیں کرتے تھے۔ سابق کپتان گلبدین نائب کے ان الزامات سے ٹیم میں اختلافات بڑھ سکتے ہیں اور سارے میچ ہارنے کے با وجود ٹیم نے کرکٹ شائقین کا جو دل جیتا تھا اس کو نقصان پہنچے گا۔

Published: 22 Jul 2019, 3:10 PM
next