تنقید سے حوصلہ نہیں ہارتا اور نہ ہی تعریف سے خوش ہوں: بمراہ

بمراہ نے کہا کہ یہ کرکٹ کی خوبصورتی ہے۔ ایک دن سب چیزیں آپ کے حق میں جاتی ہیں، دوسرے دن آپ کو بہت کوشش کرنے کے بعد بھی کچھ نہیں ملتا۔ لیکن پھر آپ کو مستحکم ہونے کی ضرورت ہے۔

جسپریت بمراہ، تصویر آئی اے این ایس
جسپریت بمراہ، تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

لندن: جسپریت بمراہ اگر ریسلر ہوتے تو حقیقی دنیا کے سپر اسٹار ہوتے۔ لوگ بمراہ کی تعریف کریں گے جب اس نے اچھا کیا یا اچھا دن گزرا، لیکن اس سے بمراہ کو زیادہ فرق نہیں پڑتا۔ وہ اپنے آپ پر ثابت قدم رہتے ہیں اور سوالات کے جوابات دیتے ہوئے الفاظ کا انتخاب حقیقت کے بہت قریب تر ہوتا ہے اور جب ان کا دن اچھا نہیں ہوتا ہے یا جب وہ اچھا نہیں کرتے ہیں تو وہ خود سے زیادہ مایوس نہیں ہوتے ہیں۔

گزشتہ پیر اور منگل کو ہی بمراہ کی زیرقیادت تیز گیند بازی اٹیک کو انگلینڈ کے بلے بازوں نے دھو ڈالا اور وہ 377 رنز کے ہدف کو بچانے کے کہیں قریب نہیں تھے۔ بمراہ نے اس اننگز میں 4.35 کے رن ریٹ سے رنز دیئے۔ ایک ہفتے کے بعد بمراہ نے تقریباً انہی بلے بازوں کے سامنے سات اووروں میں چھ وکٹ لیے۔ اس میچ کے دوران ان کی سوئنگ حیران کن تھی، اس کے علاوہ انہیں پچ سے سیون موومنٹ بھی مل رہی تھی۔ انہوں نے کچھ زیادہ الگ نہیں کیا تھا۔


میچ کے بعد پریس کانفرنس کے دوران بمراہ نے کہا کہ "یہ کرکٹ کی خوبصورتی ہے۔ ایک دن سب چیزیں آپ کے حق میں جاتی ہیں، دوسرے دن آپ کو بہت کوشش کرنے کے بعد بھی کچھ نہیں ملتا۔ لیکن پھر آپ کو مستحکم ہونے کی ضرورت ہے۔ ہر دن ایک نیا دن ہے۔ کئی دن آپ کو پہلی ہی گیند پر باہر کا کنارہ مل جاتا ہے، پھر کئی دن آپ اچھی باؤلنگ کے بعد بھی کنارے تلاش کرتے رہتے ہیں۔ لیکن آپ کو اس سے متاثر ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ میں ہمیشہ وہی تیار کرتا ہوں اور جو میرے اختیار میں نہیں ہے اس کے بارے میں زیادہ نہیں سوچتا۔ اس کے بعد جو بھی نتیجہ آئے میں اسے قبول کرتا ہوں اور آگے بڑھتا ہوں۔

کیا یہ آپ کی بہترین باؤلنگ تھی؟ اس سوال کے جواب میں بمراہ نے کہا کہ ’’میں اپنی بولنگ کا فیصلہ نہیں کرتا اور نہ ہی مجھے نتیجہ کی اتنی فکر ہے۔ ایسے وقت ضرور آئے ہوں گے جب میں نے آج سے اچھی باؤلنگ کی ہے لیکن وکٹ نہیں ملی، لیکن میں اسی روٹین اور طریقہ کار کو فالو کرتا ہوں۔ جی ہاں، آج مجھے سفید گیند سے سوئنگ اور سیم دونوں مل رہے تھے اور میں اس سے فائدہ اٹھانا چاہتا تھا۔ میں نے اس بارے میں شمی بھائی سے بھی بات کی اور طے کیا کہ سوئنگ کا فائدہ اٹھانے کے لیے ہم گیند کو تھوڑا آگے رکھیں گے۔ یہ ایک اچھا دن تھا کہ ہمیں ایک وکٹ ملی۔


کرکٹ کمنٹیٹر ناصر حسین نے بمراہ کو حالیہ دنوں میں تینوں فارمیٹس کا بہترین باؤلر قرار دیا ہے۔ لیکن بمراہ اس سے زیادہ متاثر نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میں ان سب باتوں پر توجہ نہیں دیتا۔ آج کا دن اچھا تھا اس لیے لوگ تعریف کر رہے ہیں۔ تنقید کرنے پر میں نہ تو خوش ہوں اور نہ ہی مایوس ہوں۔ مجھے تمام فارمیٹس کھیلنے میں مزہ آتا ہے اور میں جو کر سکتا ہوں وہ کرنے کی کوشش کرتا ہوں۔ میں ان باتوں کا احترام کرتا ہوں جو لوگ میرے بارے میں کہتے ہیں لیکن اسے زیادہ سنجیدگی سے نہیں لیتے۔ میں ان تمام لوگوں کا مشکور ہوں جنہوں نے میری تعریف کی لیکن میں ہمیشہ ایک مستحکم ذہن رکھتا ہوں۔ یہ میرا عمل ہے۔"

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


;