کولکتہ کی خطرناک گیندبازی کے آگے راجستھان نہیں ٹک پائی ، شیوم اور فرگیوسن کی زبردست گیندبازی

نوجوان شیوم ماوی اور تجربہ کار لوکی فرگیوسن کولکتہ کی جیت کے ہیرو رہے ۔ انہوں نے مل کر سات وکٹیں حاصل کیں اور راجستھان کی بلے بازی کی کمر توڑ دی۔

تصویر آئی اے این ایس
تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

شیوم ماوی اور لوکی فرگوسن کی خطرناک گیندبازی کی بدولت کولکتہ نائٹ رائیڈرز نے جمعرات کو آئی پی ایل 14 کے 54 ویں میچ میں راجستھان رائلز کے خلاف 86 رنز کی بھاری جیت درج کی۔ اس کے ساتھ ہی کولکتہ نے پلے آف میں کوالیفائی کرنے کی اپنی امیدوں کو مضبوط کیا۔

شارجہ کی سست پچ پر پہلے بلے بازی کرتے ہوئے کولکتہ نے 20 اوورز میں 171 رنز کا چیلنجنگ اسکور بنایا۔ جواب میں بڑے ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے راجستھان کی ٹیم کولکتہ کی خطرناک گیندبازی کے سامنے ٹک نہیں سکی۔ کولکتہ نے راجستھان کو 16.1 اوورز میں 85 رنز پر سمیٹ دیا۔


نوجوان ہندوستانی گیندباز شیوم ماوی اور تجربہ کار لوکی فرگیوسن کولکتہ کی جیت کے ہیرو رہے۔ انہوں نے مل کر سات وکٹیں حاصل کیں اور راجستھان کی بلے بازی کی کمر توڑ دی۔ ماوی نے 3.1 اوورز میں 21 رنز دے کر چار اور فرگیوسن نے چار اوورز میں 18 رنز دے کر تین وکٹیں حاصل کیں۔ ان کے علاوہ ورون چکرورتی اور شکیب الحسن نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔ شیوم ماوی کو ان کی شاندار گیندبازی کے لئے 'پلیئر آف دی میچ' دیا گیا۔

راجستھان کی طرف سے راہل تیوتیا ہی بلے بازی نے تسلی بخش کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ راہل نے پانچ چوکوں اور دو چھکوں کی بدولت 36 گیندوں پر سب سے زیادہ 44 رن بنائے۔ ان کے علاوہ شیوم دوبے نے 20 گیندوں پر 18 رن بنائے جبکہ دیگر سبھی بلے باز کے کے آر کے گیندبازوں کے سامنے ناکام ثابت ہوئے۔


سلامی بلے بازوں شبھمن گل اور وینکٹیش ایر نے شاندار شروعات کی۔ دونوں نے پہلے وکٹ کے لئے 79 رن کی شراکت کی۔ شبھمن نے چار چوکوں اور دو چھکوں کی مدد سے 44 گیندوں پر 55 رن بنائے جبکہ وینکٹیش نے تین چوکوں اور دو چھکوں کی مدد سے 35 گیندوں پر 38 رن کا تعاون دیا۔

اس بڑی جیت کے ساتھ کولکتہ نے نہ صرف دو پوائنٹ حاصل کئے بلکہ اپنے نیٹ رن ریٹ میں بھی اضافہ کیا ہے۔ اس کا رن ریٹ اب +0.587 ہوگیا ہے۔ جو پہلے نمبر کی ٹیم دہلی کیپٹلز اور دوسرے نمبر کی چنئی سپرکنگز سے بھی زیادہ ہے۔ ایسے میں اب کولکتہ کے پلے آف میں پہنچنے کی امیدوں زیادہ بڑھ گئی ہیں۔ ممبئی بھی اس دوڑ میں برقرار ہے لیکن اس کے سامنے پہاڑ جیسا ہدف ہے ۔ اس اپنے آخری میچ میں نہ صرف جیت حاصل کرنی ہوگی بلکہ بڑے فرق سے جیتنا ہے جو آسان نہیں ہوگا۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔