سابق کرکٹر وسنت رائے جی کا 100 سال کی عمر میں انتقال، سچن کا اظہار تعزیت

ہندستان کے سب سے پرانے سابق فرسٹ کلاس کرکٹر وسنت رائے جی کا ہفتہ کے روز ممبئی میں انتقال ہوگیا۔ وہ 100 برس کے تھے

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

ممبئی: ہندستان کے سب سے پرانے سابق فرسٹ کلاس کرکٹر وسنت رائے جی کا ہفتہ کے روز ممبئی میں انتقال ہوگیا۔ وہ 100 برس کے تھے۔ رائے کے داماد سدرن ناناوتی نے ان کی موت کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ سابق ​​کرکٹر ضعیف العمری سے متعلق بیماری کی وجہ سے چل بسے۔ رائے جی کے داماد کے مطابق ان کا انتقال دوپہر 2.20 بجے ممبئی میں واقع اپنی رہائش گاہ پر ہوا۔ ان کے پسماندگان میں ان کی بیوی اور دو بیٹیاں ہیں۔

دائیں ہاتھ کے بیٹسمین نے بیرار کے خلاف کرکٹ کلب آف انڈیا کے لئے 1939 میں ہونے والے فیسٹیول میچ میں اپنے کیریر کی شروعات کی تھی۔ اس میچ میں تجربہ کار کرکٹرز سی کے نائڈو ، مشتاق علی ، وجے ہزارے اور لالہ امرناتھ جیسے کھلاڑی بھی شامل تھے۔ رائے جی پھر 1941 میں ممبئی کے لئے کھیلے۔ انہوں نے وجے مرچنٹ کی کپتانی میں ویسٹرن انڈیا کے خلاف ممبئی کے لئے اپنا آغاز کیا۔

انہوں نے اپنے کیریئر میں کل نو فرسٹ کلاس میچ کھیلے۔ انہوں نے نو میچوں کی 14 اننگز میں 277 رنز بنائے تھے جبکہ 68 رنز انکا سب سے زیادہ اسکور تھا۔ ان کا ایک عشرے پر محیط کیریر دوسری جنگ عظیم سے متاثر رہا۔ بعد میں وہ کرکٹ کے مورخ بن گئے اور انہوں نے متعدد کتابیں لکھیں۔ جب رائے جی 13 سال کے تھے تو ہندوستان نے پہلا ٹیسٹ میچ جنوبی ممبئی کے بامبے جم خانہ میں کھیلا تھا۔رواں سال 26 جنوری کو وسنت رائے جی نے اپنی زندگی کی سنچری مکمل کی۔ اس کے بعد لیجنڈ کرکٹر سچن تندولکر اور سابق آسٹریلیائی کپتان اسٹیو وا ان سے ملنے گئے۔

سچن کا رائے جی کی موت پر اظہار تعزیت

لیجنڈ آف انڈیا کرکٹر سچن تندولکر نے سابق فرسٹ کلاس کرکٹر وسنت رائے جی کے انتقال پر تعزیت کا اظہار کیا ہے۔ سچن نے ٹویٹ کیا کہ میں نے اس سال کے شروع میں وسنت رائے جی سے ان کی 100 ویں سالگرہ منانے کے لئے ملاقات کی۔ انھیں کرکٹ کھیلنے اور دیکھنے کا بہت شوق تھا۔ مجھے ان کی موت کا شدید غم ہے۔ ان کے اہل خانہ اور دوستوں سے میری تعزیت۔