کرکٹ: کرشمائی اسپنر راشدخان نے افغانستان کی ٹی-20 کپتانی ٹھکرائی

راشد خان کا کہنا ہے کہ ’’میں ٹیم کے لئے ایک کھلاڑی کے طور پر اچھا کرنا چاہتا ہوں اورمیرا مظاہرہ ٹیم کے لئے زیادہ اہم ہے بجائے اس کے کہ میں کپتانی کے بارے میں زیادہ سوچوں۔‘‘

افغانستان کے معروف کرکٹ کھلاڑی راشد خان
افغانستان کے معروف کرکٹ کھلاڑی راشد خان
user

یو این آئی

ابوظہبی: کرشمائی لیگ اسپنر راشد خان نے افغانستان کی ٹی20 ٹیم کی کپتانی یہ کہتے ہوئے ٹھکرادی کہ وہ لیڈر سے زیادہ ایک کھلاڑی کے طورپر ٹیم کے لئے بیش قیمت ثابت ہوسکتے ہیں۔ 22سالہ لیگ اسپنر نے کہا کہ ’’میں اپنے دماغ میں پوری طرح واضح ہوں کہ میں ایک کھلاڑی کی حیثیت سے بہترہوں۔ میں ٹیم کے نائب کپتان کے طورپر ٹھیک ہوں اورکپتان کو جو مدد چاہیے وہ میں دے سکتا ہوں۔ میرے لئے اس عہدے سے دوررہنازیادہ بہترہے۔

راشد خان نے اپنی بات آگے بڑھاتے ہوئے یہ بھی کہا کہ’’میں ٹیم کے لئے ایک کھلاڑی کے طور پر اچھا کرنا چاہتا ہوں اورمیرا مظاہرہ ٹیم کے لئے زیادہ اہم ہے بجائے اس کے کہ میں کپتانی کے بارے میں زیادہ سوچوں۔ ابھی میرے لئے سب سے اہم عالمی کپ ہے۔ مجھے لگتا ہے کہ کپتانی سے ٹیم کے لئے میری کارکردگی پر اثر پڑ سکتا ہے۔ اس لئے میں ایک کھلاڑی کے طورپر خوش ہوں اور بورڈ و سلیکشن کمیٹی جو بھی فیصلہ کریں گے میں اس کی حمایت کروں گا۔‘‘

قابل ذکر ہے کہ افغانستان نے کرکٹ کے فارمیٹ میں اپنی ٹیموں کی کپتانی تبدیل کی ہے۔ 2019 کے ون ڈے ورلڈ کپ سے پہلے افغان بورڈ نے اصغر افغان کوکپتانی سے ہٹایاتھا اور گلبدن دین کو ونڈے اوررحمت شاہ کو ٹیسٹ ٹیم کو کپتان بنایا تھا، جبکہ راشد کو ٹی 20 کاکپتان بنایا گیا تھا۔ لیکن افغانستان کی ورلڈ کپ مہم بغیرکسی جیت کے ختم ہوگئی تھی اور گلبدین کو ونڈے کپتانی سے ہٹادیا گیا تھا اورخان کو تینوں فارمیٹ کاکپتان بنادیا گیا تھا۔ دسمبر 2019 میں افغان کوواپس بلاکر کپتان بنایا گیا لیکن 15 مہینے کپتان رہنے کے بعد انہیں ایک بارپھر حال ہی میں ہٹادیا گیا۔ مڈل آرڈرکے سینئر بلے باز حشمت اللہ شاہدی کو نیا ون ڈے اورٹیسٹ کپتان بنایا گیا ہے، لیکن ٹی 20 کی کپتانی ابھی معمہ بنی ہوئی ہے جبکہ ٹورنامنٹ ہونے میں پانچ مہینے کا وقت باقی رہ گیا ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔