پٹرول-ڈیزل 25 روپے کم کرےحکومت: کانگریس

کانگریس نے کہا ہے کہ عالمی بازار میں خام تیل کی قیمت میں جس سطح پر تخفیف ہوئی ہے اس کے مطابق ملک کے عوام کو راحت دیتے ہوئے حکومت کو پٹرول اور ڈیزل کی قیمت 25 روپیے تک کم کرنی چاہیے

پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں/ تصویر آئی اے این ایس
پٹرول اور ڈیزل کی قیمتیں/ تصویر آئی اے این ایس
user

یو این آئی

نئی دہلی: کانگریس نے کہا ہے کہ عالمی بازار میں خام تیل کی قیمت میں جس سطح پر تخفیف ہوئی ہے اس کے مطابق ملک کے عوام کو راحت دیتے ہوئے حکومت کو پٹرول اور ڈیزل کی قیمت 25 روپیے تک کم کرنی چاہیے۔

کانگریس کے ترجمان گورو ولبھ نے بدھ کو یہاں پارٹی ہیڈکوارٹر میں ایک خصوصی پریس کانفرنس میں مطالبہ کیا کہ مودی حکومت تیل پر ایکسائز ڈیوٹی کو کانگریس حکومت کی سطح پر کر عالمی بازار میں خام تیل کی قیمت میں ہونے والی کمی کا فائدہ ملک کے عوام کو پہنچائے اور پٹرول کی قیمت میں 26.42 روپے اور ڈیزل کی قیمت میں 25.24 روپے کم کرے۔

انہوں نے کہا کہ حال ہی میں ہماچل پردیش سمیت کئی ریاستوں میں ضمنی انتخابات میں شکست کے بعد مودی حکومت نے فوری طور پر 5 روپے فی لیٹر کی کم کرنے کا جھنجھنا عوام کو تھما دیا جبکہ یہ تخفیف 8 روپے فی لیٹر کی کمی کے حساب سے کی جانی چاہیےتھی لیکن اصل فائدے سے ملک کے عوام کو محروم کر دیا۔


ترجمان نے کہا کہ حکومت پٹرول اور ڈیزل پر ٹیکس لگا کر منافع خوری کر رہی ہے جس کی وجہ سے اشیائے ضروریہ کی قیمتیں آسمان کو چھو رہی ہیں۔ حکومت عوام کی تکالیف سے غافل ہو کر پٹرول اور ڈیزل پر حد سے زیادہ ٹیکس لگا کر اپنی جیبیں بھرنے میں مصروف ہے اور خام تیل کی قیمتوں میں کمی کا فائدہ ملک کے عوام تک نہیں پہنچ رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایک طرف عوام مہنگائی کا شکار ہیں تو دوسری طرف دسمبر میں ملک میں بے روزگاری کی شرح 7.9 فیصد اور شہری بے روزگاری کی شرح 9.3 فیصد کی بلند سطح پر پہنچ گئی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔