ریلائنس جیو کے 9.99 فیصد شیئر خریدیگی فیس بک، 43.5 ہزار کروڑ کا معاہدہ طے

مارک زكربرگ نے مزید کہا کہ ’’مکیش امبانی اور پوری جیو ٹیم کو اس پارٹنر شپ کے لئے شکریہ ادا کرتا ہوں، میں اس سودے کے حوالہ سے بہت زیادہ پرجوش ہوں‘‘۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

یو این آئی

ممبئی: دنیا کی معروف سوشل نیٹ ورکنگ کمپنی فیس بک نے ہندوستانی سرمایہ دارمکیش امبانی کے ریلائنس جیو پلیٹ فارم میں بدھ کو 43754 کروڑ روپے (6.22 ارب ڈالر) کی بڑی سرمایہ کاری کرکے 9.99 فیصد حصص خریدنے کا اعلان کیا۔ ریلائنس انڈسٹریز کی جانب سے بیان جاری کرکے اس کی اطلاع دی گئی۔ دنیا کی کسی ٹیلی کمیونیکیشن کمپنی میں اتنی بڑی رقم کی سرمایہ کاری سے اتنے کم حصص خریدنے کا یہ سب سے بڑا سودا ہے۔

فیس بک نے اپنی ویب سائٹ پر اس کی اطلاع دیتے ہوئے کہا کہ ہندوستان کی سب سے بڑی ٹیلی کمیونیکیشن کمپنی ریلائنس جیو میں 9.99 فیصد حصہ 43574 کروڑ روپے میں خریدا ہے۔ اس سودے کے ساتھ ساتھ فیس بک ریلائنس جیو کا سب سے بڑا شیئر ہولڈر بن گیا۔ جیو نے سرمایہ کاری پر کہا کہ ’’فیس بک اور جیو کا سودا کئی زاویوں سے بے مثال ہے اور یہ ٹیکنالوجی کمپنی میں اتنے کم حصہ کے لئے سب سے بڑی سرمایہ کاری ہے۔ ہندوستان میں کسی ٹیکنالوجی کمپنی میں یہ اب تک کی سرمایہ کاری کی سب سے زیادہ رقم ہے‘‘۔

عالمی وبا كووڈ -19 کے چیلنجز پر فتح حاصل کرنے کے لئے گزشتہ ایک ماہ سے ملک میں جاری لاک ڈاؤن کے درمیان ملک میں سرمایہ کاری کی یہ خبر بڑی راحت بھری ہے۔

فیس بک کے ساتھ شراکت پر امبانی نے کہا ’’2016 میں جب ہم نے جیو کی شروعات کی تھی تو ہم نے ایک خواب دیکھا۔ یہ خواب تھا ہندوستان کے ’ڈجیٹل سروودیہ‘ کا، یہ خواب تھا ہندوستان میں ایک ایسے جامع ڈجیٹل انقلاب کا جس سے ہر ہندوستانی کی زندگی بہتر ہو سکے۔ خواب۔ ایک ایسے انقلاب کا جو اسے’ڈجیٹل دنیا‘ کی چوٹی تک پہنچا سکے۔ لہٰذا ہندوستان کی ڈجیٹل ایكوسسٹم کی فروغ وترقی اور تبدیلی کے لئے ہم اپنے طویل مدتی پارٹنر کے طور پر فیس بک کا خیرمقدم کرتے ہیں۔ جیو اور فیس بک کے درمیان مطابقت وزیر اعظم نریندر مودی کے ڈجیٹل انڈیا کے خواب کو تکمیل کرنے میں مدد ملے گی‘‘۔

انہوں نے کہا جیو اورفیس بک کی شراکت پی ایم مودی کے ڈجیٹل انڈیا مشن کا خواب مکمل ہونے میں مدد مل سکتی ہے، اس کے دو مقصد تھے۔ پہلا ہندوستان کے ہر شہری کے لئے سکون اور خوشیوں سے بھری زندگی یعنی ’ایز آف لونگ‘، دوسرا، ہر ہندوستانی کے لئے کاروبار کے اچھے مواقع یعنی ’ایز آف بزنس‘۔ مجھے مکمل یقین ہے کہ کورونا وائرس کے بعد تھوڑے ہی وقت میں ہندوستان کی معیشت تیزی سے بڑھے گی۔ یہ پارٹنرشپ اس تبدیلی کو لانے میں خاصی مدد کر سکتی ہے۔

فیس بک نے جیو میں سرمایہ کاری پر کہا ’’یہ ہندوستان کے تئیں فیس بک کے عزم کی عکاسی کرتا ہے۔ جیو نے ہندوستان کے ٹیلی کمیونیکیشن کے شعبے میں جو بڑی تبدیلی لائی ہے اس سے ہم بھی بہت زیادہ پرجوش ہیں۔ چار سال سے بھی کم مدت میں جیو نے تقریبا 38 کروڑ 80 لاکھ افراد کو آن لائن پلیٹ فارم پر لانے میں کامیابی حاصل کی۔ یہ نئی ایجاد اور نئے کاروبارکو فروغ دے کر لوگوں کو نئے نئے طریقوں سے اپنے ساتھ جوڑ رہا ہے۔ لہذا جیو کے ذریعے ہم ہندوستان میں پہلے سے زیادہ لوگوں کے ساتھ شامل ہونے کے لئے اس سودے کے ذریعے مزید سرگرم ہوئے ہیں‘‘۔

فیس بک کے چیف ایگزیکٹیو مارک زكربرگ نے اس سودے پر کہا کہ ’’فی الحال دنیا میں بہت کچھ چل رہا ہے مگر میں ہندوستان میں اپنے کام پر ایک اپ ڈیٹ شیئر کرنا چاہتا ہوں کہ جیو پلیٹ فارم کے ساتھ فیس بک مل کر کام کر رہا ہے۔ ہم ایک مالی سرمایہ کاری کر رہے ہیں اور اس سے بھی زیادہ ہم کچھ اہم پروجیکٹ پر ایک ساتھ کام کرنے کے لئے مصروف عمل ہیں جس سے ہندوستان بھر میں لوگوں کو کاروبار کے نئے مواقع ملیں گے‘‘۔

مارک زكربرگ نے مزید کہا کہ ’’مکیش امبانی اور پوری جیو ٹیم کو اس پارٹنر شپ کے لئے شکریہ ادا کرتا ہوں، میں اس سودے کے حوالہ سے بہت زیادہ پرجوش ہوں‘‘۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔