کیرالہ میں تمام مذاہب کے لوگ امن سے رہتے ہیں اس لیے یہاں مودی نہیں: جان اَبراہم

کیرالہ سے تعلق رکھنے والے بالی وڈ کے معروف اداکار جان ابراہم نے مودی کا کیرالہ میں اثر کیوں نہیں ہے کے جواب میں کہا کہ یہاں تمام مذاہب کے لوگ امن و سکون سے رہتے ہیں

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

بالی وڈ کے معروف اداکار جان ابراہم سے جب یہ پوچھا گیا کہ کیرالہ ابھی تک مودی کے رنگ میں کیوں نہیں رنگا تو انہوں نے سیدھے جواب نہ دیتے ہوئے بھی سیدھے جواب دے دیا۔ مدراس کیفے اور باٹلا ہاؤس جیسی فلموں میں کام کر چکے اداکار جان ابراہم کو فلموں میں ان کے ایکشن اور نجی زندگی میں انہیں خاموش طبیعت سمجھا جاتا ہے۔

جان ابراہم جمعرات کو مصنف مرلی کے مینن کی کتاب پر مبنی ’گاڈ ہو لوڈ موٹر بائیکس‘ کے رسم اجرا پر پہنچے تھے۔ اس موقع پر انہوں نے کیرالہ اور اپنے بچپنے کے حوالہ سے باتیں کیں۔

کیرالہ ابھی تک مودی کے رنگ میں کیوں نہیں رنگا اس سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے اپنے جواب میں کہا ’’یہ کیرالہ کی خوبصورتی ہے کہ یہاں محض دس میٹر کے اندر اندر آپ کو مندر، مسجد اور چرچ ایک ساتھ نظر آتے ہیں اور سب بغیر کسی دشواری کے ایک ساتھ رہتے ہیں ۔ یہاں پر کوئی مسئلہ ہی نہیں ہے ۔ جب ساری دنیا پولرائزڈ ہو رہی ہے ، کیرالہ ایک مثال ہے جہاں تمام مذاہب اور برادری کے لوگ ہم آہنگی کے ساتھ رہتے ہیں ۔‘‘

واضح رہے کیرالہ ان ریاستوں میں سے ایک ایسی ریاست ہے جہاں سال 2019 کے عام انتخابات میں کانگریس کے قیادت والے اتحاد یو ڈی ایف کو 20 میں سے 19 سیٹیں ملی تھیں اور وہاں مودی کا اثر بالکل نظر نہیں آیا تھا ۔ کیرالہ میں بی جے پی نہ تو کبھی اقتدار میں رہی ہے اور نہ ہی اس کو کبھی کوئی قابل ذکر انتخابی کامیابی ملی ہے ۔

 کیرالہ میں تمام مذاہب کے لوگ امن سے رہتے ہیں اس لیے یہاں مودی نہیں: جان اَبراہم

بالی وڈ کے معروف اداکار جان ابراہم جو نہ صرف ایکشن فلموں کے ہیرو ہیں بلکہ انہوں نے حب الوطنی کے موضوع پر کئی فلموں میں اداکاری کی ہے اور وہ نوجوانوں میں کافی مقبول ہیں ۔ جان ابراہم کے اس جواب میں بر سر اقتدار جماعت کے لئے واضح پیغام ہے کہ بی جے پی کی لہر وہیں تک پہنچی ہے جہاں مذہبی اختلافات ہیں اور سماج میں فرقہ وارانہ ہم آہنگی کا فقدان ہے ۔

Published: 27 Sep 2019, 8:10 PM