امریکہ نے ایران کے خلاف سائبر جنگ کا اعلان کر دیا: ایرانی عہدیدار

ایرانی شہری دفاعی تنظیم کے سربراہ غلام رضا جلالی نے کہا کہ امریکا نے ایران کی تنصیبات اور بنیادی ڈھانچے کے خلاف سائبر جنگ کا آغاز کر دیا

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

قومی آوازبیورو

ایرانی شہری دفاعی تنظیم کے سربراہ غلام رضا جلالی نے کہا کہ امریکا نے ایران کی تنصیبات اور بنیادی ڈھانچے کے خلاف سائبر جنگ کا آغاز کر دیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق پاسداران انقلاب کے بریگیڈیئر رضا جلالی نے تہران میں نماز جُمعہ سے قبل ایک تقریر میں کہا کہ امریکا نے ایرانی سائبر انفراسٹرکچر پرباضابطہ طور پر سائبر جنگ مسلط کر رکھی ہے۔

انہوں نے کہا کہ 20 جون کو ایرانی فوج کی طرف سے امریکا کےایک ڈرون کو مار گرائے جانے کے بعد امریکیوں نے ایران کے بنیادی ڈھانچے ، قدرتی گیس اور بجلی کی تنصیبات پرسائبرحملے شروع کر رکھے ہیں۔

واشنگٹن پوسٹ اور 'ایسوسی ایٹڈ پریس' نے اس وقت امریکی عہدے داروں کے حوالے سے بتایا تھا کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے ذریعہ آپریشن کا حکم دیا گیا تھا۔ امریکی صدر کے حکم پر ایرانی پاسداران انقلاب کے اڈوں، کمپیوٹر سسٹم کو نشانہ بنانا اور ایرانی میزائلوں کو کنٹرول کرنے والے کمپیوٹر نظام میں خلل ڈالنا تھا۔

تاہم رضا جلالی نے دعویٰ کیا کہ امریکا اپنے مقاصد میں ناکام رہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ایرانی دفاعی فورسز نے امریکی کے سائبر حملے مکمل ناکام بنا دیے ہیں