یو اے ای نے پاکستان کے مسافروں کو ویزا جاری کرنے پر روک لگائی

س مرتبہ صرف 12 ممالک کے خلاف یہ پابندی عائد کی گئی ہے۔ واضح رہے کہ جن ممالک کے لئے ویزا جاری کرنے پر روک لگائی گئی ہے، اس میں ہندوستان کا نام شامل نہیں ہے۔

تصویر بشکریہ العربیہ ڈاٹ نیٹ
تصویر بشکریہ العربیہ ڈاٹ نیٹ
user

قومی آوازبیورو

ابو ظہبی: متحدہ عرب امارات (یو اے ای) نے پاکستان سمیت 12 ممالک کے لئے وزٹ اور ورک ویزا کے اجرا پر پابندی عائد کر دی ہے۔ کورونا وبا کے پھیلنے کے بعد یہ دوسرا موقع ہے جب یو اے ای کی طرف سے اس طرح کی پابندی عائد کی گئی ہے۔ تاہم ستمبر میں تمام ممالک کے لئے ویزوں پر پابندی عائد کی گئی تھی جبکہ اس مرتبہ صرف 12 ممالک کے خلاف یہ پابندی عائد کی گئی ہے۔ واضح رہے کہ جن ممالک کے لئے ویزا جاری کرنے پر روک لگائی گئی ہے، اس میں ہندوستان کا نام شامل نہیں ہے۔

العربیہ اردو کی رپورٹ کے مطابق اسلام آباد میں متحدہ عرب امارات کے سفارت خانے کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ ’اماراتی حکومت نے کورونا کی دوسری لہر کے پیش نظر پاکستانیوں کے لیے وزٹ یعنی سیاحتی اور ورک ویزہ پرمٹ پر پابندی لگائی ہے۔ تاہم پاکستان سے ریڈ یعنی سفارتی پاسپورٹ پر سفر کرنے کے مجاز افراد جن میں وزراء، سفارت کار اور اعلی سرکاری افسران شامل ہیں کے ویزے سفارت خانے میں پروسیس کیے جا رہے ہیں۔

متحدہ عرب امارات نے پاکستان کے علاوہ ترکی، ایران، یمن، شام۔ عراق، صومالیہ، لیبیا، کینیا، افغانستان کے شہریوں کو وزٹ اور ورک ویزہ دینے پر پابندی لگائی ہے۔ پاکستان کے دفتر خارجہ نے اس خبر کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ یو اے ای حکام کی طرف سے لیا گیا یہ فیصلہ کورونا وبا کی دوسرے لہر سے متعلق ہو سکتا ہے۔

پاکستانی دفتر خارجہ کے ترجمان زاہد حفیظ چوہدری کی جانب سے جاری کر دہ بیان میں کہا گیا ہے کہ ’’متحدہ عرب امارات کی جانب سے پاکستان سمیت 12 ممالک کے لیے نئے وزٹ ویزوں کے اجرا کی عارضی طور پر معطلی کے بارے میں علم ہوا ہے۔ اس معطلی کا اطلاق پہلے سے جاری شدہ ویزوں پر عائد نہیں ہو گا۔‘‘ بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ’یہ اقدام کورونا کی دوسری لہر سے متعلق ہو سکتا ہے۔ ہم اس بارے میں اماراتی حکام سے تصدیق کر رہے ہیں۔‘

تاہم اماراتی سفارت خانے کے مطابق ’یہ پابندی غیر معینہ مدت کے لیے لگائی گئی ہے۔ اس کے خاتمے کا انحصار کورونا کی موجودہ لہر پر ہے۔ اگر اس میں جلدی کمی آجاتی ہے اور تو جلد ہی معمول کے مطابق ویزہ سروس بحال ہو جائے گی۔‘

اس سے قبل متحدہ عرب امارات 17 مارچ 2020 کو سفارتی پاسپورٹ کے علاوہ دیگر تمام ویزوں کا اجرا بند کر دیا تھا جس کی وجہ بھی کورونا وائرس تھی۔ جب عالمی ادارہ صحت کی جانب سے وائرس کو عالمی وبا قرار دیا گیا تھا۔

تاہم اگست میں وزٹ ویزے جبکہ ستمبر میں مخصوص کمپنیوں کو ورک ویزوں کے اجرا کی اجازت مل گئی تھی۔ اس طرح ستمبر میں ہی کورونا ٹیسٹ منفی آنے کی صورت میں متحدہ عرب امارات کے سفر کی اجازت بھی دے دی گئی تھی۔

Published: 19 Nov 2020, 4:11 PM
next