سعودی عرب: مسلمان زائرین سیاحتی ویزے سے عمرہ بھی ادا کرسکیں گے 

سعودی عرب کے محکمہ سیاحت و قومی ثقافتی ورثہ کے چیئرمین احمد ال خطیب نے کہا ہے کہ “مملکت سعودی نے دنیا بھر سے آنے والے تمام سیاحوں کے لیے سیاحتی ویزے جاری کرنا شروع کردیئے ہیں۔

تصویر العربیہ ڈاٹ نیٹ
تصویر العربیہ ڈاٹ نیٹ

قومی آوازبیورو

الریاض : سعودی عرب کی حکومت کی طرف سے پوری دنیا کے لوگوں کے لیے ملک میں سیاحت کے دروازے کھول دیئے ہیں۔ سیاحتی ویزے کا حصول بھی انتہائی آسان کردیا گیا ہے۔ اس کے ساتھ سعودی حکومت نے یہ اضافی سہولت دی ہے کہ مملکت میں سیاحت کی غرض سے آنے والے غیر ملکی مسلمان اسی عمرہ پر عمرہ کی سعادت بھی حاصل کرسکیں گے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق دنیا بھر کے سیاح اپنے ملکوں میں سعودی عرب کے نمائندہ دفاتر، سفارت خانوں اور قونصل خانوں سے سیاحتی ویزے حاصل کرسکتے ہیں۔ اس کے علاوہ آن لائن بھی سیاحتی ویزے حاصل کیے جاسکتے ہیں۔ تاہم امریکا، ایشیا اور یورپ کے 49 ممالک کے سیاحوں کوآسان پیشگی شرائط کے تحت ویزے جاری کیے جائیں گے۔

سعودی عرب کے محکمہ سیاحت و قومی ثقافتی ورثہ کے چیئرمین احمد ال خطیب نے کہا ہے کہ "مملکت دنیا بھر سے آنے والے تمام سیاحوں کے لیے سیاحتی ویزے جاری کرنا شروع کردیئے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ سیاحتی ویزوں کا اجراء ملک میں روزگار کے بے پناہ مواقع پیدا کرے گا۔

سعودی سیاحتی ویزا کی ایک سب سے اہم خوبی یہ ہے کہ اسے بغیر کسی پیشگی شرط کے عمرہ کی ادائی کے لیے استعمال کیا جاسکتا ہے۔ خواتین کے لیے کسی محرم کا ساتھ ہونا ضروری نہیں۔ عمرہ کی سہولت حج سیزن کے علاوہ پورا سال میسر ہوگی۔

سیاحتی ویزے میں کسی خاص مذہب یا عقیدے کی قید نہیں لگائی جائے گی۔ مسلمان زائرین سعودی عرب میں سیاحت کے ساتھ ساتھ عمرہ بھی ادا کرسکیں گے اور انہیں سیاحتی ویزے پر سعودی عرب میں 90 دن تک قیام کی اجازت ہوگی۔

ویزے کی دیگر خصوصیات

  • محرم کے بغیرعمرہ کی اجازت۔
  • ورکنگ ویزا کے لیے کسی کفیل کی ضرورت نہیں ہوگی۔
  • بلا استثنا تمام مذاہب کے پیروکاروں کو سعودی عرب میں آنے کی اجازت۔
  • سال کے بارہ ماہ سیاحوں کو مملکت میں سیاحت کے لیے آنے کی اجازت۔

عالمی سفر اور سیاحت کونسل کے سفیر جیرالڈ لاولیس نے کہا ہے کہ سعودی عرب کے اس فیصلے سے مملکت کی مجموعی پیداوار 3 سے بڑھ کر 4 فیصد ہوجائے گی کیونکہ پوری دنیا میں سیاحت کی آمدن 5 فی صد تک پہنچ چکی ہے۔ سعودی سیاحتی ویزا کے اعلان کے تحت، ریئل اسٹیٹ، خوراک اور دیگر سروسز کےشعبوں میں ایک کھرب ریال مالیت کے سمجھوتوں پر دستخط کیے جائیں گے۔

ٹرپل فائیو گروپ کے نمائندے کرسٹوس ماراواٹوس نے کہا کہ سعودی سیاحتی ویزا کا اعلان دنیا کی سیاحتی کمپنیوں کے لیے ایک اہم خبر ہے۔ اس اعلان سے عالمی کمپنیوں کو سعودی عرب کی مارکیٹ تک رسائی کا ایک بڑا موقع فراہم کیا گیا ہے۔ سعودی عرب کا 49 ممالک کے لیے ویزے جاری کرنے کا اعلان سعودی عرب کی معیشت کو پھلنے پھولنے کا نیا موقع فراہم کرے گی۔

(بشکریہ العربیہ ڈاٹ نیٹ)

Published: 29 Sep 2019, 10:10 PM