کیا حقیقت ہے ایران اور امریکہ کے مابین قیدیوں کے تبادلے کی رپورٹ؟

رپورٹ میں کہا ہے کہ امریکہ نے ایران میں ضبط پڑی اس کی املاک کے بدلے میں سات ارب ڈالر کا بھی وعدہ کیا ہے۔

ایرانی صدر حسن روحانی / العربیہ ڈاٹ نیٹ
ایرانی صدر حسن روحانی / العربیہ ڈاٹ نیٹ
user

یو این آئی

ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان سعید خاطب زادہ نے پیر کو امریکہ اور ایران کے مابین قیدیوں کے تبادلہ کےمعاہدہ سے متعلق میڈیا رپورٹ سے انکار کیا ہے۔

خیال رہے کہ لبنان کے براڈکاسٹر اے مایادین نے ایران کے ذرائع کے حوالے سے اتوار کو خبر دی تھی کہ دونوں ملک اپنے یہاں قید ایک دوسرے کے شہریوں کی ادلا بدلی کا منصوبہ بنا رہے ہیں۔ رپورٹ میں کہا ہے کہ امریکہ نے ایران میں ضبط پڑی اس کی املاک کے بدلے میں سات ارب ڈالر کا بھی وعدہ کیا ہے۔ امریکی محکمہ خارجہ پہلے ہی اس رپورٹ کو خارج کرچکا ہے۔

خاطب زادہ نے پریس کانفرنس میں کہاکہ امریکہ کے ساتھ قیدیوں کی ادلا بدلی سے متعلق رپورٹ صحیح نہیں ہے۔ قیدیوں کا مسئلہ تھا اور یہ ایک انسانی معاملہ ہے اور یہ ایران کے ایجنڈہ میں ہمیشہ رہا ہے۔ نیوکلیائی معاہدہ پر ہوئی بات چیت سے علیحدہ اس کی نگرانی کی گئی ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


Published: 04 May 2021, 6:11 AM