ابو ظہبی میں مقیم ہندوستانی جوڑے کی لاش برآمد

جاں بحق ہونے والے جوڑے کا ایک ہی بیٹا ہے جس نے ابوظہبی سے تعلیم حاصل کی اور جو اس وقت ہندوستان کے شہر بنگلورو میں نوکری کرتا ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

ابو ظہبی میں ایک ہندوستانی جوڑے کو ان کے فلیٹ میں مردہ حالت میں پایا گیا ہے۔ جوڑے کا تعلق ریاست کیرالہ سے تھا اور وہ دونوں گزشتہ 18 سالوں سے ابوظہبی میں مقیم تھے۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق ان کے نام جناردھنن پیٹیری اور منیجا تھا۔ ان کا اکلوتہ بیٹا بنگلورو میں کام کرتا ہے۔ موت کے وجوہات کا فی الحال پتہ نہیں چل سکتا ہے اور پولیس معاملہ کی جانچ کر رہی ہے۔

خلیج ٹائمز کے مطابق 57 سالہ پیٹیری ایک ٹریول ایجنسی میں کام کرتا تھا جبکہ اس کی 52 سالہ بیوی مینیجا ایک آڈٹ فرم میں کام کرتی تھی۔ ان کے دفاتر میں ان کے ساتھ کام کرنے والے دیگر ساتھیوں کے مطابق دونوں میاں بیوی معمول کے مطابق زندگی بسر کر رہے تھے۔ تاہم شوہر پیٹیری کی گزشتہ دنوں نوکری چلی گئی تھی۔

ان کے ساتھ کام کرنے والے ایک ساتھی کا کہنا تھا کہ "وہ دونوں خاموش طبع اور پرسکون لوگ تھے، مجھے یاد نہیں پڑتا کہ ان کا کبھی کسی دوسرے ساتھی کے ساتھ جھگڑا ہوا ہو۔ پیٹٰیری کی گزشتہ دنوں نوکری چلی گئی تھی اور انہوں نے اپنی کار بھی بیچ دی تھی”۔ ان کے کولیگ کا مزید کہنا تھا کہ ان کی موت غیر متوقع ہے، اس خبر سے تمام دوست اور کولیگ سکتے میں ہیں۔ جاں بحق ہونے والے جوڑے کا ایک ہی بیٹا ہے جس نے ابوظہبی سے تعلیم حاصل کی اور جو اس وقت ہندوستان کے شہر بنگلورو میں نوکری کرتا ہے۔

جناردھنن پیٹیری اور منیجا کے دوست نے بتایا کہ جاں بحق ہونے والے جوڑے کے بیٹے نے مجھے فون پر بتایا کہ اس کے والدین گزشتہ چار دنوں سے اس کے فون کا جواب نہیں دے رہے، جس پر میں جہاں وہ رہائش پذیر تھے اس عمارت میں گیا۔ مجھے اس عمارت کے چوکیدار نے بتایا کہ میں نے ان لوگوں کو گزشتہ کچھ دنوں سے نہیں دیکھا۔ تاہم جمعرات کی رات پولیس نے انہیں ان کے فلیٹ میں مردہ حالت میں پایا۔ ایک سماجی کارکن ان کی میتیں ہندوستان واپس بھیجنے کے لیے کوشش کر رہا ہے۔

next