اسرائیلی فوج کی رہائشی عمارت پر بمباری میں14 فلسطینی جاں بحق

امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے کہا کہ جب غزہ کی مستقل حیثیت کی بات آتی ہے تو اس حوالے سے وہ بہت واضح ہیں، نقل مکانی کرنے والوں کی گھروں کو واپسی کی حمایت کرتے ہیں۔

<div class="paragraphs"><p>فائل تصویر آئی اے این ایس</p></div>

فائل تصویر آئی اے این ایس

user

قومی آوازبیورو

اسرائیلی فوج نے جبالیہ میں 2 رہائشی عمارت پر بمباری کرکے مزید 14 فلسطینیوں کو جاں بحق کردیا جبکہ گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران 195 افراد مارے جاچکے ہیں۔وفا نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق شمالی غزہ میں جبالیہ پناہ گزین کیمپ میں 2 رہائشی گھروں پر اسرائیلی حملوں میں کم از کم 14 افراد مارے گئے۔ْ 

غزہ کی طبی ذرائع نے الجزیرہ کو بتایا ہے کہ خان یونس میں ایک دن میں کم از کم 40 فلسطینی مارے گئے، 24 گھنٹوں کے دوران 195 افراد شہید ہوئے۔7 اکتوبر سے غزہ پر اسرائیلی حملوں میں کم از کم 25 ہزار 490 افراد شہید اور 63 ہزار سے زائد زخمی ہو چکے ہیں، 7 اکتوبر کو حماس کے حملے سے اسرائیل میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد ایک ہزار 139 ہے۔


اسرائیلی فوج نے خان یونس کا نصیر ہسپتال فوری خالی کرنے کا حکم دے دیا، ڈاکٹرز ود آؤٹ بارڈرز تنظیم نے بتایا کہ اسرائیل کی مسلسل بمباری کے باعث بے گھر افراد، مریضوں اور عملے کو ہسپتال سے نکلنے میں شدید مشکلات پیش آرہی ہیں۔

دوسری جانب امریکا نے غزہ میں علاقائی تبدیلیوں اور غزہ میں بفرزون بنانے کی اسرائیلی تجویز کی مخالفت کردی۔ امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے کہا کہ جب غزہ کی مستقل حیثیت کی بات آتی ہے تو اس حوالے سے وہ بہت واضح ہیں، نقل مکانی کرنے والوں کی گھروں کو واپسی کی حمایت کرتے ہیں۔

Follow us: Facebook, Twitter, Google News

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔


;