راجستھان: آگرہ روڈ پر پیدل جا رہے مزدوروں کے لئے مفت بسیں

روڈویز کے چیف جنرل منیجر نوین جین نے اتوار کو بتایا کہ مزدوروں کو بسوں کے ذریعہ مفت میں ان کی منزل یا اتر پردیش کی سرحد تک چھوڑنے کا انتظام کیا گیا ہے۔

تصویر قومی آواز
تصویر قومی آواز
user

یو این آئی

جے پور: راجستھان میں آگرہ روڈ پر آگرہ کی سمت جانے والے مزدوروں کو بارڈر تک یا ان کی منزل تک پہنچانے کے لئے راجستھان ریاستی ٹرانسپورٹ کارپوریشن نے 110 بسوں کا انتظام کیا ہے۔

روڈویز کے چیف جنرل منیجر نوین جین نے اتوار کو بتایا کہ مزدوروں کو بسوں کے ذریعہ مفت میں ان کی منزل یا اتر پردیش کی سرحد تک چھوڑنے کا انتظام کیا گیا ہے۔ دوپہر تک 62 بسیں اتر پردیش کی سرحد پر مزدوروں کو چھوڑ چکی تھیں اور دیگر 110 بسیں روانہ کی گئیں۔ اس کے ساتھ ہی نجی بسیں چلائی جانے کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ جے پور سے آگرہ روڈ پر بڑی تعداد میں مزدور اترپردیش بارڈر تک پیدل ہی جارہے ہیں۔انہیں جلد از جلد ریاستی سرحد میں ان کی منزل تک پہنچانے کے سلسلے میں اتوار کو ضلع کلکٹر ڈاکٹر جوگارام، ٹرانسپورٹ محکمے کے کمشنراور انتطامیہ سکریٹری روی جین اور اڈیشنل پولیس کمشنر اجے پال سنگھ لامبا کے ساتھ ہوئی میٹنگ میں تفصیلی بحث کے بعد یہ فیصلہ کیا گیا ہے۔

جین نے بتایا کہ یہ بسیں عام شہریوں کےلئے نہیں ہیں۔ یہ صرف ان مزدوروں کےلئے ہیں جو سڑک پر چل رہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ آج سے نجی بسوں کو بھی چلایا جا رہا ہے، لیکن یہ بسیں بھی آگرہ روڈ پر چل رہے مہاجر مزدوروں کو ہی ان کی منزل تک پہنچائے گی۔ انہوں نے عام لوگوں اور طلبہ کو صلاح دی ہے کہ لاک ڈاؤن پر پوری طرح عمل کریں اور ان بسوں میں سفر کرنے کی کوشش نہ کریں۔

Published: 29 Mar 2020, 4:11 PM