افغانستان: زلزلہ سے ہر طرف تباہی، مہلوکین کی تعداد 1000 کے پار، 1500 سے زائد زخمی

زلزلہ کا جھٹکا صرف افغانستان میں ہی نہیں محسوس کیا گیا بلکہ پاکستان کی راجدھانی اسلام آباد کی زمین بھی ڈول گئی، ریکٹر اسکیل پر زلزلہ کی شدت 6.1 بتائی جا رہی ہے۔

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا
user

قومی آوازبیورو

افغانستان میں منگل کی دیر شب آئے شدید زلزلہ میں اب تک 1000 سے زائد افراد کے ہلاک ہونے کی خبریں سامنے آ چکی ہیں۔ زلزلہ نے افغانستان میں زبردست تباہی کا منظر پیدا کر دیا ہے اور اب بھی ہر طرف آہ و بکا کا عالم ہے۔ ڈیزاسٹر مینجمنٹ محکمہ کے ڈپٹی منسٹر مولوی شرف الدین نے دعویٰ کیا ہے کہ 1500 سے زائد لوگ زخمی ہوئے ہیں جن کا مختلف اسپتالوں میں علاج جاری ہے۔ قابل ذکر ہے کہ بدھ کی صبح 255 لوگوں کی ہلاکت کی خبریں سامنے آئی تھیں، لیکن اس کے بعد سے لگاتار مہلوکین کی تعداد میں اضافہ دیکھا گیا۔ اندیشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ مہلوکین کی تعداد میں مزید اضافہ ہو سکتا ہے۔

واضح رہے کہ زلزلہ کا جھٹکا صرف افغانستان میں ہی نہیں محسوس کیا گیا بلکہ پاکستان کی راجدھانی اسلام آباد کی زمین بھی ڈول گئی۔ ریکٹر اسکیل پر زلزلہ کی شدت 6.1 بتائی جا رہی ہے۔ یو ایس جیولوجیکل سروے کے مطابق زلزلہ کا مرکز افغانستان کے جنوب مشرق میں تھا۔ اس زلزلہ کا سب سے زیادہ اثر افغانستان کے پکتیکا اور خوست علاقہ میں دیکھنے کو ملا۔


پاکستانی میڈیا کے مطابق زلزلہ کے جھٹکے اسلام آباد سمیت کچھ دیگر شہروں میں بھی محسوس کیے گئے، لیکن کسی جانی نقصان کی اطلاع نہیں ہے۔ سوشل میڈیا پر بھی لوگ زلزلہ سے متعلق جانکاریاں دے رہے ہیں۔ کچھ لوگوں نے لکھا ہے کہ زلزلے کے یہ جھٹکے کچھ سیکنڈ تک محسوس ہوئے تھے، جس کی وجہ سے لوگ ڈر کر اِدھر اُدھر بھاگنے لگے تھے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔