مدھیہ پردیش: بی جے پی نے کی ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی، مجرمانہ کیس درج

مدھیہ پردیش میں انتخابی تشہیر کا وقت ختم ہونے کے باوجود بی جے پی نے رتلام شہر اور الوٹ اسمبلی حلقہ میں تشہیری کام جاری رکھا۔ اس سلسلے میں پولس نے مجرمانہ کیس درج کرتے ہوئے تین گاڑیاں بھی ضبط کیں۔

By یو این آئی

رتلام: مدھيہ پردیش کے ضلع رتلام میں انتخابی مہم کے آخری دن دو مقامات پر ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کے معاملے میں دو مجرمانہ کیس درج کئے گئے۔ ان معاملوں میں پولس نے تین گاڑیاں بھی ضبط کی ہیں۔

پولیس ذرائع کے مطابق، رتلام شہر اسمبلی حلقہ میں تشہیر کی معیاد کار ختم ہونے کے باوجود شام تقریباً ساڑھے پانچ بجے بھارتیہ جنتا پارٹی کی دو گاڑیاں تشہیر کرتی ہوئی پائی گئیں۔ دونوں گاڑیاں ضبط کر لی گئی ہیں۔ ان گاڑیوں پر بی جے پی لیڈر نتن لوڈھا کے نام پر جاری تشہیر کا اجازت نامہ چسپاں تھا۔ اس بنیاد پر پولس تھانہ اسٹیشن روڈ نے نتن لوڈھا کے خلاف مجرمانہ معاملہ درج کرلیا ہے۔

اسی طرح الوٹ اسمبلی حلقہ کے گاؤں بڑاودا میں بی جے پی کی تشہری ریلی نکالی جارہی تھی۔ اس ریلی میں پابندی کے باوجود ایک گاڑی میں ڈی جے بجایا جا رہا تھا۔ اس معاملے میں پولس نے گاڑی ضبط کرتے ہوئےاس کے ڈرائیور ناهرو کمار مالی اور گاڑی کے مالک رمیش سین کے خلاف ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کا معاملہ درج کیا ہے۔