پرگیہ ٹھاکر نے دیا مضحکہ خیز بیان، کہا ’جیٹلی، سشما اور بابو لال کو جادو-ٹونا کے ذریعہ مارا گیا‘

پرگیہ ٹھاکر نے ایک جلسہ میں کہا کہ بی جے پی کے کئی سرکردہ لیڈران کا انتقال بے وقت ہو گیا ہے۔ اس کے پیچھے اپوزیشن پارٹیوں کی سازش ہے۔ پارٹی لیڈروں کے اوپر جادو-ٹونا جیسا کچھ کیا جا رہا ہے۔‘‘

تصویر سوشل میڈیا
تصویر سوشل میڈیا

قومی آوازبیورو

بی جے پی کے سرکردہ لیڈران ارون جیٹلی، سشما سوراج اور بابو لال گور کا گزشتہ کچھ دنوں میں انتقال ہو گیا جس سے بی جے پی میں ایک غم کا ماحول ہے۔ اس درمیان بھوپال سے بی جے پی رکن پارلیمنٹ اور شعلہ بیان خاتون لیڈر پرگیہ ٹھاکر نے ایک انتہائی مضحکہ خیز بیان دیا ہے۔ انھوں نے کہا کہ ہے کہ بی جے پی کے کئی سرکردہ لیڈران کا انتقال بے وقت ہو گیا ہے اور اس کے پیچھے اپوزیشن پارٹیوں کی سازش ہے۔ انھوں نے کہا کہ بی جے پی لیڈروں کے اوپر جادو-ٹونا جیسا کچھ کیا جا رہا ہے جس سے ان کی موت ہو رہی ہے۔

دراصل پرگیہ سنگھ ٹھاکر آج بی جے پی کے آنجہانی لیڈروں کو دیئے جارہے خراج عقیدت کے پروگرام میں شریک ہوئیں اور وہیں مذکورہ متنازعہ بیان دیا۔ اس بیان کے بعدایک بار پھر سے پارٹی کےلئے مشکلیں پیدا ہوگئی ہیں۔ سابق مرکزی وزیر ارون جیٹلی اور سابق وزیراعلی بابولال گور کی یاد میں منعقد جلسے میں دونوں لیڈروں کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ ’’مجھے کچھ دن پہلے کسی نے اپوزیشن کے تئیں آگاہ کیاتھا اور اب پارٹی کے تین سینئر لیڈروں کے بے وقت انتقال سے لگنے لگا ہے کہ انہیں کیوں اپوزیشن کے تئیں آگاہ کیاگیاتھا۔‘‘

پرگیہ ٹھاکر کا ایک ویڈیو بھی خبر رساں ایجنسی ’اے این آئی‘ نے ٹوئٹر ہینڈل پر شیئر کیا ہے۔ اس میں وہ کہتی ہوئی نظر آ رہی ہیں کہ ’’ آپ سادھنا (عبادت) کم مت کرنا۔ اس کا وقت بڑھاتے رہنا۔ سادھنا کم مت کرنا کیونکہ بہت برا وقت ہے۔ اپوزیشن کوئی ایسا کام کر رہا ہے، کوئی ایسی مارک شکتی (جادو-ٹونا) کا استعمال کر رہا ہے جو بی جے پی کو نقصان پہنچانے کے لیے ہے۔‘‘ ویڈیو میں وہ مزید کہتی ہوئی نظر آ رہی ہیں کہ ’’آپ ٹارگیٹ ہیں، اس لیے دھیان رکھیے گا۔ ایک مہاراج جی کی بات کو میں نے بھیڑ میں چلتے چلتے سنا اور بھول گئی۔ لیکن آج جب میں یہ دیکھتی ہوں کہ واقعی میں ہماری اعلیٰ قیادت، کبھی سشما جی، بابو لال جی، پھر جیٹلی جی، اور ایسے کئی لیڈران جو درد سہتے ہیں، من میں سوال اٹھتا ہے کہ کہیں یہ سچ تو نہیں۔ لیکن یہ سچ ہے کہ ہمارے بیچ سے ہماری قیادت، لگاتار جا رہی ہے، وقت سے پہلے ہمارے لیڈران جا رہے ہیں۔‘‘

پرگیہ ٹھاکر کے اس بیان کے بعد ریاست کی سیاست میں ایک نیا تنازعہ پیدا ہوگیاہے۔حالانکہ پارٹی کے کئی لیڈروں نے ان کے اس بیان سے کنارہ کرلیا ہے۔پروگرام میں موجود پارٹی کی ریاستی اکائی کے صدر راکیش سنگھ نے کہا کہ ’’پرگیہ ٹھاکر کے اس بیان کو سیاسی چشمے سے دیکھا جانا چاہیے۔‘‘