ہمت ہے تو مرکزی حکومت کو برخاست کر کے بیلٹ پیپر سے انتخاب کرائیں، نانا پٹولے

بی جے پی نے لگاتار دو سال تک اس حکومت کا تختہ الٹنے کی کئی کوششیں کیں، یہاں تک کہ راج بھون کے ذریعے بھی کوششیں کیں لیکن کوئی فائدہ نہیں ہوا

نانا پٹولے، تصویر یو این آئی
نانا پٹولے، تصویر یو این آئی
user

یو این آئی

ممبئی: مہاراشٹر میں مہاوکاس اگھاڑی حکومت کو برخاست کرکے دوبارہ انتخاب کرائے جانے کے بی جے پی کے چیلنج کا کانگریس نے سخت جواب دیا ہے۔ مہاراشٹر پردیش کانگریس کے صدر نانا پٹولے نے کہا ہے کہ اگر بی جے پی میں ہمت ہے تو مرکزی حکومت کو برخاست کر کے بیلٹ پیپر کے ذریعے انتخابات کروائے۔

بی جے پی پر تنقید کرتے ہوئے نانا پٹولے نے کہا کہ ریاست میں مہا وکاس اگھاڑی کی حکومت بننے کے بعد بھارتیہ جنتا پارٹی کے لیڈروں میں ہلچل مچ گئی ہے۔ بی جے پی نے لگاتار دو سال تک اس حکومت کا تختہ الٹنے کی کئی کوششیں کیں، یہاں تک کہ راج بھون کے ذریعے بھی کوششیں کیں لیکن کوئی فائدہ نہیں ہوا۔


ریاستی صدر نے کہا کہ سی بی آئی، ای ڈی، انکم ٹیکس، این سی بی جیسی مرکزی ایجنسیوں کے ذریعے بھی مہاوکاس اگھاڑی حکومت کے وزراء اور لیڈروں کو جھوٹے مقدمات میں پھنسانے اور مہاراشٹر کو بدنام کرنے کی کارروائی کی گئی ہے، لیکن حکومت گرنے کے بجائے مزید مضبوط ہوتی گئی۔

اب بی جے پی پر بوکھلاہٹ طاری ہوچکی ہے اور اسی بوکھلاہٹ میں مہاوکاس اگھاڑی حکومت کو برخاست کرنے کی زبان استعمال کی گئی۔ لیکن اگر بی جے پی میں ہمت ہے تو وہ مرکزی حکومت کو برطرف کر کے بیلٹ پیپر کے ذریعے انتخابات کرائے، اور اگرایسا ہوا اس میں یقینی طور پر بی جے پی کو شکست ہوگی۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔