کورونا کا خوف: تمل ناڈو میں بھی ماسک ہوا لازمی، حکم کی خلاف ورزی پر 500 روپے جرمانہ

تمل ناڈو میں بھی گزشتہ کچھ دنوں میں کورونا کے تازہ معاملوں میں اضافہ دیکھا گیا ہے، محکمہ نے پہلے متاثرین کی تعداد میں گراوٹ کے بعد ماسک کی لازمیت کو واپس لے لیا تھا۔

کورونا وائرس/ آئی اے این ایس
کورونا وائرس/ آئی اے این ایس
user

قومی آوازبیورو

تمل ناڈو کے محکمہ صحت نے جمعہ کو جاری ایک حکم میں ریاست میں ماسک پہننے کو ایک بار پھر لازمی قرار دیا ہے۔ اس حکم کی خلاف ورزی کرنے والوں کو 500 روپے جرمانہ ادا کرنا ہوگا۔ محکمہ نے کہا کہ ملک میں، خصوصاً دہلی میں کورونا کے بڑھتے معاملوں کو دیکھتے ہوئے یہ فیصلہ لیا گیا ہے۔

تمل ناڈو میں بھی گزشتہ کچھ دنوں میں کورونا کے تازہ معاملوں میں معمولی اضافہ دیکھنے کو ملا ہے۔ محکمہ نے پہلے متاثرین کی تعداد میں گراوٹ کے بعد ماسک کی لازمیت کو واپس لے لیا تھا۔ اب معاملوں میں اضافہ دیکھے جانے کے بعد ایک بار پھر ماسک کو لازمی قرار دے دیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ تمل ناڈو میں جمعرات کو 39 افراد کورونا پازیٹو پائے گئے تھے۔


قابل ذکر ہے کہ آئی آئی ٹی مدراس کے 12 طالب علم بھی کورونا پازیٹو پائے گئے اور ادارہ کو جمعرات کو کورونا زون قرار دے دیا گیا تھا۔ حالانکہ گنڈی سرکاری اسپتال سے ابتدائی علاج کرانے کے باوجود طلبا کو اسپتال میں داخل کرنے کی ضرورت نہیں پڑی تھی۔ آئی آئی ٹی مدراس کے ذرائع نے خبر رساں ایجنسی اائی اے این ایس کو بتایا کہ جب وہ گنڈی سرکاری اسپتال میں طلبا کو داخل کرنے کے لیے تیار تھے، تو ڈاکٹروں نے انھیں بتایا کہ طلبا کو اسپتال میں داخل کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔

قومی آواز اب ٹیلی گرام پر بھی دستیاب ہے۔ ہمارے چینل (qaumiawaz@) کو جوائن کرنے کے لئے یہاں کلک کریں اور تازہ ترین خبروں سے اپ ڈیٹ رہیں۔